زمبابوے میں سنگین معاشی بحران سے کرنسی کی قدر کم

38

ہراہرے (انٹرنیشنل ڈیسک) زمبابوے شدید معاشی بحران کی زد میں آگیا۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق رابرٹ موگابے کے 30 سالہ اقتدار کاخاتمہ ہونے کے بعد ایمرسن منانگاگوا جولائی میں نئے صدر منتخب ہوئے۔ نئے صدر سے عوام کو امید تھی کہ وہ ملک کی تعمیر وترقی میں اہم کردار کریں گے اورغربت و افلاس کا خاتمہ ہوجائے گا، تاہم چند ہی ماہ میں ملک بدترین بحران سے دوچار ہوگیا۔ نئے وزیر خزانہ نے ایک ترقیاتی منصوبے کا اعلان کیا، جس کے بعد ملک بھر میں پیٹرول کی شدید قلت پیدا ہوگئی۔ مقامی کرنسی اتنی گرگئی ہے کہ لوگ تھیلوں میں نوٹ لے کر مارکیٹ جاتے ہیں تب بھی ہفتے بھر کا راشن پورا نہیں ہوپاتا۔ ملکی عوام پریشانی کے عالم میں سپر اسٹورز کا رخ کررہے ہیں تاہم وہاں سامان سے خالی شیلف اور آسمان سے باتیں کرتی قیمتیں ان کا منہ چڑارہی ہیں۔ دارالحکومت میں پینے کے خراب پانی کی فراہمی کے باعث ہیضے کی وبا 40 افراد کو نگل چکی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ