کیس شروع ہونے سے قبل ہی اسحاق ڈار کی اراضی فروخت ہونے کا انکشاف

92

اسلام آباد (اے پی پی) قومی احتساب بیورو (نیب )نے سابق وزیرخزانہ اسحاق ڈار کے اثاثوں کی نیلامی کے حوالے سے پیشرفت رپورٹ احتساب عدالت میں جمع کرادی ہے۔ رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ اسحاق ڈار کی اسلام آباد میں 6 ایکڑ اراضی کیس شروع ہونے سے پہلے ہی فروخت کردی گئی تھی۔ اسحاق ڈار کے بینک اکاؤنٹس میں رقوم کی تفصیلات پنجاب حکومت کے حوالے کر دی گئی ہیں ۔ بدھ کو احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈارکیخلاف اثاثہ جات ریفرنس کی سماعت کی۔ سماعت کے دوران نیب کے تفتیشی افسر نادر عباس نے اسحاق ڈار کے اثاثوں کی نیلامی سے متعلق پیشرفت رپورٹ جمع کرائی۔ رپورٹ میں انکشاف ہوا کہ اسلام آباد میں 6 ایکڑ اراضی کیس شروع ہونے سے پہلے ہی فروخت کردی تاہم سابق وزیر خزانہ، ان کی بیوی اور بیٹے کے 3 پلاٹوں کی قرقی سے متعلق تعمیلی رپورٹ بھی جمع کرادی گئی۔ نیب نے اسحاق ڈار اور ان کمپنیوں کے اکاؤنٹس میں 5 کروڑ 83 لاکھ روپے کی تفصیلات پنجاب حکومت کے حوالے کردیں۔ نیب حکام کا کہنا تھا کہ اسحاق ڈار کی گاڑیاں تحویل میں لینے کیلیے رہائش گاہ پر چھاپا مارا گیا لیکن گاڑیاں موجود نہیں تھیں جبکہ اسحاق ڈار اور ان کی اہلیہ کے شیئرز کی قرقی سے متعلق ایس ای سی پی کی رپورٹ کا انتظار ہے۔ رپورٹ ملنے کے بعد آئندہ سماعت پر عدالت کو پیش رفت سے آگاہ کردیا جائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ