بچہ معذوری کیس ضمانت مسترد ہونے پر کے الیکٹرک کے 9افسران عدالت سے فرار

79

کراچی ( اسٹاف رپورٹر ) کے الیکٹرک کی غفلت اور لاپروائی کے باعث8 سالہ بچہ دونوں بازوؤں سے محروم ہونے سے متعلق مقدمے میں نامزد کے الیکٹرک کے9 اعلیٰ افسران عبوری ضمانت منسوخ ہونے پر احاطہ عدالت سے فرار ہوگئے۔ ایڈیشنل سیشن جج کی عدالت میں عبوری ضمانت کی توثیق سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔ اس موقع پر مقدمے میں نامزد کے الیکٹرک کے9 اعلیٰ افسران ریاض احمد نظامانی جنرل مینیجر کریکٹومینٹیننس و دیگر اپنی عبوری ضمانت کی توثیق کے لیے ایڈیشنل سیشن جج ملیر کے روبرو پیش ہوئے۔ اس موقع پر پراسیکیوٹر نے توثیق کی درخواست کی مخالفت کرتے ہوئے اپنے دلائل میں عدالت کو بتایا کہ ملزمان مقدمے میں نامزد ہیں اور ملزمان سے تفتیش کیے بغیر قانونی تقاضے مکمل نہیں ہوسکتے۔ تحقیقات کے مراحل میں دیگر ملزمان کی بھی فاضل عدالت نے ضمانت مسترد کردی ہے اور قانونی نقطہ نظر سے ملزمان کی غفلت اورلاپروائی کے باعث بچہ تمام عمرکے لیے معذور ہوگیا ہے، ملزمان کی عبوری ضمانت میں توثیق کی گئی توشواہد جمع کرنے میں استغاثہ کو دشواری کا سامنا ہوگا جبکہ وکیل صفائی کا کہنا تھا کہ ملزمان کا تعلق مینٹیننس سے نہیں ہے، عدالت نے وکیل سرکار کی استدعا منظور کرلی اور عبوری ضمانت منسوخ کرتے ہوئے گرفتاری کا حکم دیا۔ تاہم ملزمان احاطہ عدالت سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے پولیس کسی بھی ملزم کو گرفتار کرنے میں ناکام رہی۔کے الیکٹرکسے ملزمان کی غفلت اورلاپروائی کے باعث بچہ تمام عمرکے لیے معذور ہوگیا ہے، ملزمان کی عبوری ضمانت میں توثیق کی گئی توشواہد جمع کرنے میں استغاثہ کو دشواری کا سامنا ہوگا جبکہ وکیل صفائی کا کہنا تھا کہ ملزمان کا تعلق مینٹیننس سے نہیں ہے، عدالت نے وکیل سرکار کی استدعا منظور کرلی اور عبوری ضمانت منسوخ کرتے ہوئے گرفتاری کا حکم دیا۔ تاہم ملزمان احاطہ عدالت سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے پولیس کسی بھی ملزم کو گرفتار کرنے میں ناکام رہی۔
کے الیکٹرک

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.