پنجاب میں نئے بلدیاتی نظام پر مشاورت مکمل ، شفارشات آج وزیر اعظم کو پیش ہوں گی

53

لاہور (نمائندہ جسارت) پنجاب میں نئے بلدیاتی نظام کے سلسلے میں مشاورتمکمل کرلی گئی ہے ۔ سینئر صوبائی وزیر عبدالعلیم خان اور وزیر قانون محمد بشارت راجا نے محکمہ بلدیات و قانون کے مشترکہ اجلاس میں مجوزہ بلدیاتی بل کے خد و خال کا جائزہ لیا اور اس ضمن میں پنجاب حکومت کی طرف سے تیار کردہ سفارشات سینئر وزیر عبدالعلیم خان 15ستمبر(آج) وزیر اعظم عمران خان کو پیش کریں گے جبکہ اُس سے پہلے دیگر صوبوں کے بلدیات کے وزراء سے اس معاملے پر باہم صلاح مشورہ کیا جائے گا۔ اس حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے عبدالعلیم خان نے کہا کہ ماضی کے تجربات کو سامنے رکھتے ہوئے پنجاب میں بہترین بلدیاتی نظام لانے کی کوشش کریں گے جس میں انتظامی و مالیاتی اختیارات کے علاوہ چیک اینڈ بیلنس کو بھی یقینی بنایا گیا ہو ، انہوں نے کہا کہ صوبے کے نئے
بلدیاتی سیٹ اپ میں کونسلر کو بھی ترقیاتی اسکیمیں دینے کا اختیار حاصل ہو گا جس سے گراس روٹ لیول پر اختیارات کی تقسیم اور مسائل کی نشاندہی کا موقع ملے گا ۔اس سلسلے میں منعقدہ اعلیٰ سطحی اجلاس میں سینئر وزیر عبدالعلیم خان نے بتایا کہ “کلین اینڈ گرین پنجاب”کی مہم کو صوبے بھر کے 9ڈویژنل ہیڈ کو ارٹر پر ایک ہی دن شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ستمبر کے آخری ہفتے میں شرو ع ہونے والی اس 30 روزہ مہم میں صفائی ستھرائی کے انتظامات ،شجر کاری ، تجاوزات کے خاتمے ، سینی ٹیشن کومربوط بنانے کے لیے ٹھوس بنیادوں پر کام ہوگا۔عبدالعلیم خان نے کہا کہ “کلین اینڈ گرین پنجاب”کی مہم کا افتتاح وزیر اعلیٰ پنجاب کریں گے، ہر ضلعی ہیڈ کو ارٹر پر ایک لاکھ پودے لگائیں جائیں گے۔ سیکرٹری بلدیات عارف انور بلوچ و دیگر افسران نے اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ کلین اینڈ گرین پنجاب مہم میں تمام ضلعی محکموں کو شامل کیا جا رہا ہے جبکہ عام پبلک کی آگاہی کے لیے بھی مہم ڈیزائن کی گئی ہے ،انہوں نے بتایا کہ اس سلسلے میں افسران و اہلکاران کو ڈیوٹیاں تفویض کر دی گئی ہیں جن میں کسی قسم کی غفلت برداشت نہیں کی جائے گی ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ