کامیابی کاتاج کس کے سر پر سجے گا؟

130

آج 15 ستمبر کو کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری (کے سی سی آئی) میں ہونے والے سالانہ انتخابات میں 11 سال کے بعد برسر اقتدار سراج قاسم تیلی کے بزنس مین گروپ (بی ایم جی) کا مقابلہ ایک نئے غیر معروف گروپ کے امیدواروں سے ہوگا۔ الیکشن میں حصہ لینے کے لیے مجموعی طور پر59امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے اور یہ امیدوار18اگست تک اپنے کاغذات واپس لے سکتے تھے اور امید کی جارہی تھی کہ حسب سابق تیلی کے بزنس مین گروپ ( بی ایم جی) بلا مقابلہ کامیاب ہو جائے گا ایسا نہ ہوا اور بی ایم جی کے مقابلے میں پیٹریاٹ کے نام سے ایک گروپ قائم کیا گیا جس کی اندرون خانہ سرپرستی شروع میں تاجر رہنما عقیل کریم ڈھیڈھی احمد چنائے، یحییٰ پولانی اور عبدالرحیم جانو کر رہے تھے اس گروپ کے سربراہ کے طور پر افضل چامڑیا نامی ایک تاجر سامنے آئے ہیں جو دھو راجی کالونی کے ایک الیکشن میں ابتدائی تین عہدے جیت چکے ہیں تاہم کراچی چیمبر کا الیکشن دھورا جی کا الیکشن نہیں ہوگا کیونکہ کراچی چیمبر کے مجموعی طور پر 14 ہزار 350 ووٹرز الیکشن میں اپنا حق رائے دہی استعمال کرنے کے اہل ہیں۔ تجارتی ذرائع کے مطابق پیٹریاٹ گروپ کے رہنما افضل چامڑیا نے کچھ عرصہ قبل سرا ج قاسم تیلی سے کے سی سی آئی کا صدر بننے کی خواہش ظاہر کی تھی لیکن سراج قاسم تیلی نے انہیں الیکشن میں حصہ لینے کے لیے گروپ میں شمولیت کا مشورہ دیا تھا جس کے بعد وہ براہ راست چیمبر الیکشن میں بی ایم جی کے مقابل آ گئے۔ کراچی چیمبر آف کامرس میں گزشتہ20سال سے بی ایم جی سراج قاسم تیلی کی سربراہی میں برسراقتدار ہے اور اس دوران اس گروپ نے اپنی کارکردگی سے کراچی کی بزنس کمیونٹی کے دل بھی جیتے بالخصوص بولٹن مارکیٹ سانحہ میں ہونے والی تباہی سے متاثرہ تاجروں کے نقصانات کے ازالہ کے لیے سراج قاسم تیلی اور ان کی ٹیم نے جو کردار ادا کیا وہ قابل تعریف تھا جبکہ تباہ شدہ مارکیٹوں کی ازسر نو تعمیر بھی کراچی چیمبر کا ہی کارنامہ تھا اور اسی بناء پر طویل عرصہ سے بی ایم جی گروپ کراچی چیمبر میں کامیاب ہوتا رہا ہے۔15ستمبر کو ہونے والے الیکشن میں چیمبر کی سیاست میں نووارد افضل چامڑیا نے منیجنگ کمیٹی کے لیے جو فارم جمع کرائے ان میں چند نام معروف ہیں لیکن احمد چنائے، یحییٰ پولانی اور عبدالرحیم جانو نے براہ راست یہ الیکشن لڑنے سے گریز کیا ہے۔ ذرائع کے مطابق سراج قاسم تیلی نے فیڈریشن چیمبر آف کامرس کے الیکشن میں پاکستان بزنس گروپ کا ساتھ نہیں دیا تھا بلکہ وہ فیڈریشن کی سیاست سے لا تعلق رہے اور پاکستان بزنس گروپ کے رہنماؤں کو اس بات کی ناراضی تھی کہ سراج تیلی فیڈریشن الیکشن میں ان کے ساتھ شامل کیوں نہیں ہوئے۔ سراج تیلی کا ہمیشہ سے یہی کہنا رہا ہے کہ وہ میمن ہی نہیں بلکہ پنجابی، اردو، سندھی، بلوچی سمیت ہر زبان بولنے والوں کے لیڈر ہیں اور ان کے نزدیک سب یکساں ہیں اور وہ کسی مخصوص کمیونٹی سے بالاتر ہوکر کام کر رہے ہیں۔ بزنس مین گروپ کے بیشتر رہنما چیمبر میں ہونے والے الیکشن سے خوش ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ الیکشن سے ہماری کارکردگی مزید بہتر ہوگی۔ دوسری جانب فیڈریشن میں برسراقتدار یونائٹیڈ بزنس گروپ بھی کراچی چیمبر کے الیکشن میں شروع شروع میں کوئی دلچسپی نہیں لی ۔ ان کے ایک رہنما کا کہنا تھا کہ چیمبر الیکشن میں حصہ لینے والے پیٹریاٹ گروپ نے کینیڈا میں موجود ایس ایم منیر سے حمایت کے لیے رابطہ کیا تھا مگر ایس ایم منیر نے ان کی حمایت سے انکار کر دیا ہے لیکن ایس ایم منیر کی پاکستان آمد کے بعدیونائٹیڈ بزنس گروپ(یوبی جی)نے آ ج15ستمبر کو کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری ( کے سی سی آئی ) میں ہونے والے سالانہ انتخابات میں11سال کے بعد برسر اقتدار سراج قاسم تیلی کے بزنس مین گروپ ( بی ایم جی) کا مقابلہ ایک نئے غیر معروف گروپ کے امیدواروں سے ہوگا۔ الیکشن میں حصہ لینے کے لیے مجموعی طور پر59امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے اور یہ امیدوار 18 اگست تک اپنے کاغذات واپس لے سکتے تھے اور امید کی جارہی تھی کہ حسب سابق تیلی کے بزنس مین گروپ ( بی ایم جی) بلا مقابلہ کامیاب ہو جائے گا ایسا نہ ہوا اور بی ایم جی کے مقابلے میں پیٹریاٹ کے نام سے ایک گروپ قائم کیا گیا جس کی اندرون خانہ سرپرستی شروع میں تاجر رہنما عقیل کریم ڈھیڈھی احمد چنائے، یحییٰ پولانی اور عبدالرحیم جانو کر رہے تھے اس گروپ کے سربراہ کے طور پر افضل چامڑیا نامی ایک تاجر سامنے آئے ہیں جو دھو راجی کالونی کے ایک الیکشن میں ابتدائی تین عہدے جیت چکے ہیں تاہم کراچی چیمبر کا الیکشن دھورا جی کا الیکشن نہیں ہوگا کیونکہ کراچی چیمبر کے مجموعی طور پر 14 ہزار 350 ووٹرز الیکشن میں اپنا حق رائے دہی استعمال کرنے کے اہل ہیں۔ تجارتی ذرائع کے مطابق پیٹریاٹ گروپ کے رہنما افضل چامڑیا نے کچھ عرصہ قبل سرا ج قاسم تیلی سے کے سی سی آئی کا صدر بننے کی خواہش ظاہر کی تھی لیکن سراج قاسم تیلی نے انہیں الیکشن میں حصہ لینے کے لیے گروپ میں شمولیت کا مشورہ دیا تھا جس کے بعد وہ براہ راست چیمبر الیکشن میں بی ایم جی کے مقابل آگئے۔ کراچی چیمبر آف کامرس میں گزشتہ20سال سے بی ایم جی گروپ سراج قاسم تیلی کی سربراہی میں برسراقتدار ہے اور اس دوران اس گروپ نے اپنی کارکردگی سے کراچی کی بزنس کمیونٹی کے دل بھی جیتے بالخصوص بولٹن مارکیٹ سانحہ میں ہونے والی تباہی سے متاثرہ تاجروں کے نقصانات کے ازالہ کے لیے سراج قاسم تیلی اور ان کی ٹیم نے جو کردار ادا کیا وہ قابل تعریف تھا جبکہ تباہ شدہ مارکیٹوں کی ازسر نو تعمیر بھی کراچی چیمبر کا ہی کارنامہ تھا اور اسی بناء پر طویل عرصہ سے بی ایم جی گروپ کراچی چیمبر میں کامیاب ہوتا رہا ہے۔15ستمبر کو ہونے والے الیکشن میں چیمبر کی سیاست میں نووارد افضل چامڑیا نے مینجنگ کمیٹی کے لیے جو فارم جمع کرائے ان میں چند نام معروف ہیں لیکن احمد چنائے، یحییٰ پولانی اور عبدالرحیم جانو نے براہ راست یہ الیکشن لڑنے سے گریز کیا ہے۔ ذرائع کے مطابق سراج قاسم تیلی نے فیڈریشن چیمبر آف کامرس کے الیکشن میں پاکستان بزنس گروپ کا ساتھ نہیں دیا تھا بلکہ وہ فیڈریشن کی سیاست سے لا تعلق رہے اور پاکستان بزنس گروپ کے رہنماؤں کو اس بات کی ناراضی تھی کہ سراج تیلی فیڈریشن الیکشن میں ان کے ساتھ شامل کیوں نہیں ہوئے۔ سراج تیلی کا ہمیشہ سے یہی کہنا رہا ہے کہ وہ میمن ہی نہیں بلکہ پنجابی، اردو، سندھی، بلوچی سمیت ہر زبان بولنے والوں کے لیڈر ہیں اور ان کے نزدیک سب یکساں ہیں اور وہ کسی مخصوص کمیونٹی سے بالاتر ہوکر کام کر رہے ہیں۔ بزنس مین گروپ کے بیشتر رہنما چیمبر میں ہونے والے الیکشن سے خوش ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ الیکشن سے ہماری کارکردگی مزید بہتر ہوگی۔ دوسری جانب فیڈریشن میں برسراقتدار یونائٹیڈ بزنس گروپ بھی کراچی چیمبر کے الیکشن میں شروع شروع میں کوئی دلچسپی نہیں لی ۔ ان کے ایک رہنما کا کہنا تھا کہ چیمبر الیکشن میں حصہ لینے والے پیٹریاٹ گروپ نے کینیڈا میں موجود ایس ایم منیر سے حمایت کے لیے رابطہ کیا تھا مگر ایس ایم منیر نے ان کی حمایت سے انکار کر دیا ہے لیکن ایس ایم منیر کی پاکستان آمد کے بعدیونائٹیڈ بزنس گروپ(یوبی جی)نے کراچی چیمبر آ ف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سالانہ انتخابات میں پیٹریاٹ بزنس گروپ کی حمایت کا اعلان کردیا۔یو بی جی کے ترجمان گلزار فیروزکے مطابق یونائٹیڈ بزنس گروپ کے سرپرست اعلیٰ ایس ایم منیرکی سربراہی میں یو بی جی کے اراکین خالدتواب ،زبیر طفیل اور پاکستان بزنس گروپ(پی بی جی) کے سرپرست اعلیٰ عقیل کریم ڈھیڈی کی قیادت میں احمدچنائے، مقصود اسماعیل اور یحییٰ پولانی کے مابین ہونے والی ملاقات میں یہ طے پایا کہ یونائیٹڈ بزنس گروپ 15ستمبر کوکراچی چیمبرمیں کے الیکشن میں پاکستان بزنس گروپ کے حمایت یافتہ پیٹریاٹ بزنس مین گروپ کی مکمل سپورٹ کرے گا جبکہ اس ملاقات میں باضابطہ طور پر یہ بھی طے پایا کہ پاکستان بزنس گروپ وفاق ایوانہائے تجارت وصنعت(ایف پی سی سی آئی)کے انتخابات میں یونائٹیڈ بزنس گروپ کے سامنے انتخابات میں حصہ نہیں لے گا اور یو بی جی کے امیدواروں کی حمایت کرے گا۔یو بی جی اور پی بی جی کے رہنماؤں نے دوطرفہ معاہدے کو بزنس کمیونٹی کے لیے سودمند قرار دیا ہے۔اس ضمن میں ایس ایم منیر کا کہنا تھا کہ کراچی چیمبر کے حوالے سے تاجروں کے مسائل بڑھتے جارہے تھے جبکہ ہم بزنس کمیونٹی کو یکجا کرنے کی بھی کوششیں کررہے ہیں اور یو بی جی کا عقیل کریم ڈھیڈی کے پاکستان بزنس گروپ کے ساتھ کراچی چیمبر کے لیے کیا گیا معاہدہ بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یو بی جی کراچی چیمبر کے الیکشن میں پیٹریاٹ بزنس گروپ کی حمایت کرے گا اور ہمیں امید ہے کہ وہ اپنے منشور کے مطابق کراچی کے تاجروں اورصنعت کاروں کی بہتری کے لیے اوران کے مسائل حل کرنے میں اپنا مثبت کردار ادا کریں گے۔ کراچی چیمبر آ ف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سالانہ انتخابات میں پیٹریاٹ بزنس گروپ کی حمایت کا اعلان کردیا۔یو بی جی کے ترجمان گلزار فیروزکے مطابق یونائٹیڈ بزنس گروپ کے سرپرست اعلیٰ ایس ایم منیرکی سربراہی میں یو بی جی کے اراکین خالدتواب ،زبیر طفیل اور پاکستان بزنس گروپ(پی بی جی) کے سرپرست اعلیٰ عقیل کریم ڈھیڈی کی قیادت میں احمدچنائے، مقصود اسماعیل اور یحییٰ پولانی کے مابین ہونے والی ملاقات میں یہ طے پایا کہ یونائیٹڈ بزنس گروپ 15ستمبر کوکراچی چیمبرمیں کے الیکشن میں پاکستان بزنس گروپ کے حمایت یافتہ پیٹریاٹ بزنس مین گروپ کی مکمل سپورٹ کرے گا جبکہ اس ملاقات میں باضابطہ طور پر یہ بھی طے پایا کہ پاکستان بزنس گروپ وفاق ایوانہائے تجارت وصنعت(ایف پی سی سی آئی)کے انتخابات میں یونائٹیڈ بزنس گروپ کے سامنے انتخابات میں حصہ نہیں لے گا اور یو بی جی کے امیدواروں کی حمایت کرے گا۔یو بی جی اور پی بی جی کے رہنماؤں نے دوطرفہ معاہدے کو بزنس کمیونٹی کے لیے سودمند قرار دیا ہے۔اس ضمن میں ایس ایم منیر کا کہنا تھا کہ کراچی چیمبر کے حوالے سے تاجروں کے مسائل بڑھتے جارہے تھے جبکہ ہم بزنس کمیونٹی کو یکجا کرنے کی بھی کوششیں کررہے ہیں اور یو بی جی کا عقیل کریم ڈھیڈی کے پاکستان بزنس گروپ کے ساتھ کراچی چیمبر کے لیے کیا گیا معاہدہ بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یو بی جی کراچی چیمبر کے الیکشن میں پیٹریاٹ بزنس گروپ کی حمایت کرے گا اور ہمیں امید ہے کہ وہ اپنے منشور کے مطابق کراچی کے تاجروں اورصنعت کاروں کی بہتری کے لیے اوران کے مسائل حل کرنے میں اپنا مثبت کردار ادا کریں گے۔ کراچی چیمبر آف کامرس کی مینجنگ کمیٹی30اراکین پر مشتمل ہے جن میں سے15اراکین بی ایم جی کے ہیں جبکہ سبکدوش ہونے والے15اراکین کی جگہ نئے اراکین کا انتخاب عمل میں آئے گا۔ چیمبر الیکشن میں بزنس مین گروپ کے رہنماؤں سراج قاسم تیلی، ہارون فاروقی، طاہر خالق، انجم نثار، زبیر موتی والانے اپنے گروپ کے15امیدواروں کے ناموں کا باقاعدہ اعلان کر دیا ہے جن میں جنید اسماعیل ماکڈا ( بی ایم جی کے نامزد صدر) فیصل نعیم، وسیم الرحمان، حفیظ عزیز، حسن شیخ وہرہ، شکیل الرحمان ( سنو وائٹ) محمد حنیف، سہیل احمد، شمعون ذکی ، آصف یونس سم سم، ایم ہارون قیصر ( پاک لینڈ) ہمایوں محمد، شاہد اسماعیل، شعیب سلطان اورمحمد عامر شیخ شامل ہیں۔ اس کے علاوہ بی ایم جی نے پہلے سے مینجنگ کمیٹی میں موجود رکن خرم شہزاد کو سینئر نائب صدر اور آصف شیخ جاوید کو نائب صدر کے لیے بھی نامزد کر دیا ہے جبکہ پیٹریاٹ گروپ کی جانب سے متوقع طور پر محمد افضل چامڑیا، عبیداللہ قادری، محمد عبداللہ بٹرا، عذیر خورشید اللہ والا، فرحان حنیف، اختر اسماعیل، یوسف یعقوب، رفیق سلیمان، خالد محمود پراچہ، شبانہ آصف اور دیگر شامل ہیں۔ کراچی چیمبر کے بعض ممبرز کا کہنا ہے کہ بزنس مین گروپ مسلسل11سال سے بلامقابلہ منتخب ہورہا ہے اور سراج قاسم تیلی کی سربراہی میں کلفٹن دو تلوار کے پاس کراچی چیمبر آف کامرس کی عالیشان بلڈنگ ایک ارب روپے سے بھی زائد کی لاگت سے تیار کرا رہا ہے اور پاکستان میں کسی بھی چیمبر آف کامرس کی یہ بے مثال بلڈنگ ہوگی اور بعض عناصر اس منصوبے پر نظریں گاڑ چکے ہیں۔ کے سی سی آئی کے سابق صدر اے کیو خلیل نے گفتگو میں کہا کہ ہمارے گروپ کے مقابلے میں چاہے کتنے ہی گروپ الیکشن لڑیں اور بے شک کارکردگی پر تنقید کی جاسکتی ہے مگر تمام ہی گروپوں کو الیکشن منفی رویے کے ساتھ نہیں لڑنے چاہئیں۔ اے کیو خلیل نے کہا کہ سراج قاسم تیلی کی قیادت میں بزنس مین گروپ نے کراچی کے تاجروں کی بلا امتیاز خدمت کی ہے اور ہمارے مقابلے میں جو گروپ الیکشن میں حصہ لینے آرہا ہے ان کے سرپرست اپنے آپ کو چھپا کر رکھنا چاہتے ہیں تاکہ الیکشن میں اگر وہ ہار جائیں تو بدنامی سے بچ سکیں۔چھوٹے تاجروں کی مرکزی تنظیم آل کراچی تاجر اتحاد نے کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے انتخابات برائے 2018-19 میں پیٹریاٹ بزنس مین گروپ کی حمایت کا اعلان کردیا، شہر کی 300 سے زائد اتحادی مارکیٹوں کے نمائندگان سے رابطے اور مشاورت کے بعد آل کراچی تاجر اتحاد کے چیئرمین عتیق میر نے کہا کہ پوری تاجر برادری کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی موجودہ قیادت سے بیزار اور مثبت تبدیلی کی خواہشمند ہے، انھوں نے کہا کہ شہر کے تمام بڑے اور اہم تجارتی مراکز کے تاجروں نے کراچی چیمبر میں انقلاب کے لیے پیٹریاٹ بزنس مین گروپ کی مکمل حمایت کا اعلان کیا ہے جن میں اولڈسٹی تاجر اتحاد کے چیئرمین شیخ محمد عالم، ٹیکسٹائل پلازہ کے چیئرمین اکرم رانا، گل پلازہ شاپنگ سینٹر کے چیئرمین تنویر پاستا، الائنس آف آرام باغ مارکیٹس ایسوسی ایشن کے چیئرمین آصف گلفام، طارق روڈ تاجر اتحاد کے مرکزی رہنماؤں سلام قادری،اشرف پٹیل،سہیل توّکل، گلف شاپنگ مال کلفٹن کے صدر میاں محمد طارق، گولڈ مارک شاپنگ مال ڈیفنس کے سرپرست اعلیٰ محمد جبران، صدر تاجر اتحاد کے چیئرمین الطاف لالہ، حیدری ٹریڈرز ایسوسی ایشن کے چیئرمین اختر شاہد اور دیگر شامل ہیں، عتیق میر نے کہا کہ چھوٹے تاجر کراچی چیمبر میں برسرِ اقتدار گروپ کی 20سالہ غفلتوں کو کبھی نہیں بھول سکتے۔ بزنس مین گروپ کے چیئرمین سراج قاسم تیلی کی حمایت کر نے والوں میں سابق صدور کراچی چیمبر آف کامرس اے کیو خلیل ،ہارون اگر ،میاں ابراراحمد ،افتخار احمد وہرہ ،شمیم فرپو کے علاوہ سینئر نائب صدر عبد الباسط ،رفیق بلوانی ،اقبال مانڈیا ،ناصر رنگون والا اور دیگر تاجررہنما ؤں بھر پور حمایت کا اعلان کیا۔ ان الیکشن کا ایک فائدہ یہ ہو ا کہ کراچی ایوان تجارت و صنعت کے انتخابات کے سلسلے میں کراچی چیمبر میں برسراقتداربزنس مین گروپ (بی ایم جی)کے چیئرمین سراج قاسم تیلی کی قیادت میں 15سال بعدمارکیٹوں میں دورے اور جلسوں کا آغاز کر دیا۔ مارکیٹوں میں کیے گئے دورے میں مذکورہ تاجروں نے بی ایم جی کے چیئرمین کو یقین دلایا کہ وہ15ستمبر کو منعقد ہونے والے انتخابات میں بزنس مین گروپ کے امیدواروں کو ووٹ دیں گے۔علاوہ ازیں بزنس مین گروپ کے چیئرمین اور کراچی چیمبرآف کامرس کے سابق صدر سراج قاسم تیلی نے جوڑیا بازار میں تاجروں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم 20 سال سے تاجر برادری کی خدمت کر رہے ہیں، کراچی چیمبر کے انتخابات میں بزنس مین گروپ بھاری اکثریت سے کامیاب ہوگا اور ہم کراچی کے تاجر وں کومایوس نہیں کریں گے۔ اس موقع پر کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سابق صدور محمد ہارون اگر، اے کیو خلیل،جوڑیا بازار مارکیٹ ایسو سی ایشن کے صدر اور کراچی چیمبر کے انتخابات میں منیجنگ کمیٹی کے امیدار وسیم الرحمان، بی ایم جی گروپ کی جانب سے صدارتی امیدوار جنید ماکڈا،حفیظ عزیز، عبدالقادر نورانی بھولو، شاہد اسماعیل،حفیظ عزیز،شکیل الرحمان،شمعون ذکی، رفیق بلوانی ،عارف لاکھانی ابراہیم کسومبی اور دیگر تاجر رہنماء بڑی تعداد میں موجود تھے سراج قاسم تیلی نے کہا کہ بزنس مین گروپ نے گزشتہ 20 سالوں میں بہت بڑے بڑے کام کیے ہیں۔ اس پوری صوتحال سے واضح ہو رہاہے کراچی چیمبر کے انتخابات میں برسر اقتدار سراج تیلی BMG کامیاب پیٹریاٹ بزنس گروپ کو شکست کا سامنا کرنا پڑے گا۔

کراچی چیمبر الیکشن،بی ایم جی مخالف انتخابی مہم IMFفنڈنگ دکھائی دیتی ہے،عبدالرزاق اگر
وزیراعلیٰ سندھ کے سابق معاون خصوصی اور کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سابق نائب صدر عبدالرزاق اگر نے کہا ہے کہ بعض شکست خوردہ عناصر کراچی چیمبر آف کامرس کے 15ستمبر کے الیکشن میں اس گروپ کو سپورٹ کررہے ہیں جنہیں بزنس کمیونٹی کے مسائل کا ادراک ہی نہیں ہے،بی ایم جی مخالف گروپ کی انتخابی مہم صاف ظاہرکررہی ہے جیسے انہیں پاکستانی آئی ایم ایف سے فنڈنگ ہوئی ہو اور بی ایم جی مخالف گروپ اپنی انتخابی مہم پر کروڑوں روپے کے اخراجات کررہاہے جس سے واضح ہوتا ہے کہ وہ چیمبر کے فنڈز پر نقب لگانے سے بھی گریز نہیں کریں گے۔ اپنے ایک بیان میں عبدالرزاق اگر نے کہا کہ کراچی کی بزنس کمیونٹی بی ایم جی کے بینر تلے متحد ہے اور وہ پاکستانی آئی ایم ایف کو بھی مسترد کرکے آئندہ الیکشن میں بزنس مین گروپ کو ہی کامیاب بنائے گی۔انہوں نے کہا کہ بزنس کمیونٹی میں زیادہ تر افراد ہم نوالہ اور ہم پیالہ ہیں اس لیے صرف چیمبر الیکشن کے لیے آپس میں دشمنی نہ کریں اور نہ ہی چند مفاد پرستوں کی سازشوں کا شکار ہوں بلکہ بزنس کمیونٹی کے بہتر مفاد میں مشترکہ لائحہ عمل بنایا جائے۔انہوں نے کراچی کی بزنس کمیونٹی سے کہا کہ وہ کراچی چیمبر کے الیکشن میں ووٹ دینے سے پہلے کوالٹی اور کارکردگی کومدنظر رکھیں اور چائنا کوالٹی کے دھوکے میں نہ آئیں۔عبدالرزاق اگر نے کہا کہ سراج قاسم تیلی نے شہر کی تاجراورصنعتکار برادری کے لیے مشکل ترین وقت میں جو کام کیے وہ تاریخ کا حصہ ہیں،انہوں نے بولٹن مارکیٹ سانحہ کے متاثرین کو معاوضہ دلوانے اور ان کی تباہ شدہ مارکیٹوں کی تعمیر کے لیے حکومت سندھ سے سپورٹ حاصل کی اور ایک ایک پیسہ ایمانداری کے ساتھ خرچ کیا گیا وہ اپنی مثال آپ ہے،سراج تیلی نے ڈرائنگ رومز کی سیاست نہیں کی بلکہ تاجروں کے درمیان رک کر انہیں ہر کام میں شامل رکھا ہے،کلفٹن میں کراچی چیمبر کی نئی عمارت کی تعمیر سراج قاسم تیلی کی ہی ٹیم کا کارنامہ ہے لیکن اس عالیشان عمارت کی جانب بھوکی نگاہیں جم چکی ہیں مگر بزنس کمیونٹی 15ستمبر کو کراچی چیمبر کے انتخابات میں بزنس مین گروپ کے حق میں ووٹ کاسٹ کرکے مفاد پرستو کو ان کے گھر بھیج دے گی۔

یو بی جی کے سرپرست اعلیٰ ایس ایم منیرنے سراج تیلی کے بی ایم جی کی مخالفت کا اعلان کر دیا
یونائٹیڈ بزنس گروپ(یوبی جی)نے کراچی چیمبر آ ف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سالانہ انتخابات میں پیٹریاٹ بزنس گروپ کی حمایت کا اعلان کردیا۔یو بی جی کے ترجمان گلزار فیروزکے مطابق یونائٹیڈ بزنس گروپ کے سرپرست اعلیٰ ایس ایم منیرکی سربراہی میں یو بی جی کے اراکین خالدتواب ،زبیر طفیل اور پاکستان بزنس گروپ(پی بی جی) کے سرپرست اعلیٰ عقیل کریم ڈھیڈی کی قیادت میں احمدچنائے، مقصود اسماعیل اور یحییٰ پولانی کے مابین ہونے والی ملاقات میں یہ طے پایا ہے کہ یونائیٹڈ بزنس گروپ 15ستمبر کوکراچی چیمبرمیں کے الیکشن میں پاکستان بزنس گروپ کے حمایت یافتہ پیٹریاٹ بزنس مین گروپ کی مکمل سپورٹ کرے گا ۔

پیٹریاٹ کے تمام امیدوار ان آج کامیاب ہوں گے،یوسف یعقوب پرنس
سائٹ ایسوسی ایشن آف انڈسٹری کے سابق وائس چیئرمین وپاکستان وونگ ملز ایسوسی ایشن کے موجودہ سینئر صدر اور کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں(آج) ہفتہ 15 ستمبر کو ہونے والے انتخابات میں منیجنگ کمیٹی کے عہدے پرپیٹریاٹ بزنس مین گروپ کے امیدواریوسف یعقوب پرنس نے کہا ہے کہ پیٹریاٹ بزنس مین گروپ کے تمام امیدوار ان شااللہ آج کامیاب ہوں گے اور کراچی چیمبر سے ایک نیا سورج طلوع ہوگا،اقدار میں آ کر تاجروں کے مسائل حل کریں گے ، حکومتی قرضوں اور واجبات کے اعدادوشمار حوصلہ افزاء نہیں ہیں لہٰذا حکومتی معاشی ٹیم کو فوری طور پر ٹھوس حکمت عملی مرتب دینی چاہیے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے ایک بیان میں کیا۔یوسف یعقوب پرنس نے حکومتی قرضوں اور واجبات کے اعدادوشمار کو حوصلہ افزاء نہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ حکومتی معاشی ٹیم فوری طور پر ٹھوس حکمت عملی مرتب دیں۔
کراچی چیمبر سے برسرَاقتدار گروپ کی 20 سالہ اجارہ داری کا خاتمہ ہوجائے گا،عتیق میر
آل کراچی تاجر اتحاد کے چیئرمین عتیق میر نے کراچی چیمبر کے انتخابات میں پیٹریاٹ بزنس مین گروپ کی بڑھتی ہوئی مقبولیت اور شہر بھر کے تاجروں کی حمایت کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے اس یقین کا اظہار کیا ہے کہ آج 15ستمبر2018 کوکراچی چیمبر سے برسرَاقتدار گروپ کی 20 سالہ اجارہ داری کا خاتمہ ہوجائے گا، آج شہر کی تمام بڑی مارکیٹوں، بزنس گروپس، ٹریڈ آرگنازیشنز اور دیگر اداروں کے رہنماؤں نے پیٹریاٹ بزنس مین گروپ کی حمایت میں تاجروں سے اپیل کی کہ وہ کراچی چیمبر میں تبدیلی کے لیے PBMGکی کامیابی کو یقینی بنائیں اور کراچی کے تاجروں کے کاروباری مستقبل کی بہتری کے جذبے سے NOW OR NEVERکی پالیسی اپنائیں۔

کراچی چیمبر الیکشن،بزنس مین گروپ کے 15سال بعد مارکیٹوں میں دورے اور جلسوں کا آغاز
جس کی سب سے بڑی مثال سانحہ بولٹن مارکیٹ ہے اس کے علاوہ کراچی میں امن ومان کا مسئلہ ہو، ایف بی آر کی زیادتیوں کی بات ہو یا کوئی اور معاملہ ہم نے ہر سطح پر آواز اٹھائی ہے اور تاجر برادری کو کبھی اکیلا نہیں چھوڑا ہے، انہوں نے کہا کہ کراچی چیمبر میں ہر آنے والے صدر اور اس کی ٹیم کی یہ کوشش ہوتی ہے کہ گزشتہ صدر سے اچھا کام کریں اور تاجر برادری کے لیے بلا تفریق کام کریں یہی وجہ ہے کراچی چیمبر میں موجود ہ بی ایم جی قیادت کی بدولت دیگر بڑے بڑے کاموں کے علاوہ آج کراچی چیمبر آف کامرس کی نئی عمارت کلفٹن میں تعمیر ہو ر ہی ہے کراچی چیمبر کا ہمیشہ اصول رہا ہے وہ صرف تاجر برادری کی خدمت کرے اس کے لیے کوئی بڑے سے بڑا صنعتکار ہو یا چھوٹے سے چھوٹا کراچی چیمبر کی سیڑھی چڑ ھ کر آیا تو کراچی چیمبر نے اس کا بلا تفریق کام کیا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ