تمام محکموں کے سربراہان وقت پردفتر آئیں ورنہ گھر جائیں،سعید غنی

78

کراچی (اسٹا ف رپورٹر) وزیر بلدیات سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ اب تمام محکموں میں سربراہان اور گریڈ 17 اور اس کے اوپر کے افسران کو صبح 9.00 بجے آنا ہوگا اور جو نہیں آئے گا وہ اب گھروں کو جائے گا۔ کوئی یہ نہ سمجھے کہ میں ایک دن آکر اب نہیں آؤں گا بلکہ اب روزانہ صبح 9.00 بجے تمام محکموں کے دفاتر جاؤں گا اور خود حاضری کو یقینی بناؤں گا۔ سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی اور کے ڈی اے دونوں کے ڈی جی دفتر میں موجود نہیں تھے، جس پر ان کے خلاف انکوائری کی جائے گی اور اگر واقعی وہ کسی میٹنگ یا وزٹ پر نہیں ہوں گے تو ان کو شو کاز نوٹس جاری کیا جائے گا۔ گریڈ 17 اور اس کے اوپر کے تمام افسران ایس بی سی اے، کے ڈی اے اور ایم ڈی اے میں جمعرات کے روز غیر حاضر ہیں، ان کو شوکاز نوٹس کے ساتھ ساتھ ان کی ایک دن کی تنخواہ بھی کاٹی جائے گی اور اس سے نیچے کے ملازمین کو آخری وارننگ دے رہا ہوں کہ وہ اب وقت پر دفتر میں آجائیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کی صبح 9.00 بجے ایس بی سی اے کے دفتر کے دورے اور بعد ازاں 9.20 پر کے ڈی اے کے دورے کے موقع پر موجود افسران اور بعد ازاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ وزیر بلدیات جب ایس بی سی اے کے مرکزی دفتر واقع سوک سینٹر پہنچے تو وہاں متعدد افسران اور ملازمین غیر حاضر تھے، وزیر بلدیات جب کے ڈی اے کے مرکزی دفتر میں گئے تو وہاں بھی ڈی جی سمیع صدیقی، چیف انجینئر رام چند سمیت متعدد افسران غیر حاضر تھے، جس پر وزیر بلدیات نے سخت برہمی کا اظہار کیا اور احکامات دیے کہ جو افسران غیر حاضر ہیں ان کو شوکاز دیا جائے اور ان کی تنخواہ کاٹ لی جائے۔ بعد ازاں صوبائی وزیر واٹربورڈ کے مرکزی دفتر پہنچے جہاں انہوں نے محرم الحرام کے حوالے سے منعقدہ اجلاس کی صدارت کی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ