اکرم درانی اور سراج رئیسانی پر حملہ پاکستان پر حملہ ہے‘جماعت اسلامی

103

کراچی( اسٹاف رپورٹر ) متحدہ مجلس عمل کے مرکزی رہنما، نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان اور این اے 242پر نامزد امیدوار اسداللہ بھٹو،جماعت اسلامی سندھ کے صوبائی اور ایم ایم اے سندھ کے سینئر نائب صدر ڈاکٹر معراج الہدیٰ صدیقی نے مستونگ میں سراج رئیسانی کے جلسے پر خودکش حملے میں سراج رئیسانی سمیت 85افراد کی شہادت اور بنوں میں ایم ایم اے کے مرکزی رہنما اور سابق وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا اکرم خان درانی کے قافلے پر ہونے والے حملے کی شدید مذمت اور ان دونوں واقعات میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر اپنے گہرے دکھ ،غم اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے شہید ہونے والے افراد کے درجات کی بلندی، لواحقین کے لیے صبر جمیل اور زخمی ہونے افراد کی جلد اور مکمل صحت یابی کی دعا کی ہے۔انہوں نے ایک بیان مزید کہا کہ خیبرپختونخوا اور بلوچستان دہشت گردی کے خلاف لڑی جانے والی جنگ میں فرنٹ مورچہ ہونے کے باوجود وہاں پر سیاسی جماعتوں اور انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواروں پر خودکش حملوں کا آغاز اور بڑے پیمانے پر ہلاکتوں نے پورے ملک کو ہلاکر رکھ دیا ہے اس وقت جب پولنگ میں صرف 12دن باقی ہیں سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں اور سیاسی اجتماعات پر پے درپے خودکش حملوں سے کیا پیغام دیا جارہا ہے؟ ایسے واقعات کا مسلسل رونما ہونا الیکشن کے عمل پر سوالات اور پورے عمل کو سبوتاژ کرنے کی کوشش اور غیر ملکی دشمن قوتوں کی منصوبہ بندی کا حصہ لگتا ہے، نگراں حکومت اور سیکورٹی ادارے عوام اور امیدواروں کو فول پروف سیکورٹی فراہم اور تمام سیاسی جماعتوں کو بھرپور الیکشن مہم چلانے کے لیے سازگار حالات فراہم کریں اور آئندہ کے لیے اس قسم کے واقعات کو روکنے کے لیے مؤثراقدمات کیے جائیں ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.