چیلنجز سے نمٹنے کیلیے اسٹیک ہولڈرز کو تنازعات سے باہر نکلنا ہوگا،قمر باجوہ 

51

راولپنڈی(صباح نیوز)آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ پاکستان ملک کے اندر اور باہر امن و سلامتی کے لیے پرعزم ہے، تمام اسٹیک ہولڈرز مربوط کوششیں کر کے خطے میں دیر پا امن قائم کر سکتے ہیں، پاکستان نے ناقابل تسخیر نظر آنے والے والے سیکورٹی چیلنجز کا مقابلہ کیا ہے۔ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کے مطابق ان خیالات کااظہار آرمی چیف نے ڈیفنس یونیورسٹی اسلام آباد کے دورے کے دوران نیشنل سیکورٹی اینڈ وارکورس کے شرکا سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پرآرمی چیف نے اپنے خطاب میں پاکستان کو درپیش اندرونی اور بیرونی چیلنجز پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے سیکورٹی چیلنجز سے نمٹ کر قیام امن کے لیے اپنی حد تک کافی اقدامات کیے ہیں ،پاکستان خطے میں قیام امن کے لیے کوشاں ہے تاہم خطے میں دیر پا امن قائم کرنے کے لیے تمام اسٹیک ہولڈرز کو اپنا کردار ادا کرنا ہو گا۔سربراہ پاک فوج کا کہنا تھا کہ ہر رنگ ونسل سے بالاتر ہو کر پاکستان کا تعلق تمام پاکستانیوں سے ہے۔جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ پاکستان کے اندرونی چیلنجز سے نمٹنے کے لیے ضروری ہے کہ قانون کی حکمرانی ہو اور ہمیں فرائض کی ادائیگی کو اپنے حقوق کے برابر ترجیح دینا ہو گی ۔سپہ سالار نے مزید کہا کہ ہمیں حقوق کے ساتھ فرائض بھی بجا لانا ہوں گے، مربوط قومی کوششوں سے ملک کو درپیش چیلنجز سے موثر انداز سے نبرد آزما ہو سکتے ہیں،پاکستان بلا تفریق سب پاکستانیوں کا ہے، ہائبرڈ جنگ کے ذریعے قومی سوچ کو نشانا بنایا جا رہا ہے۔آرمی چیف نے افسران کو کورس مکمل ہونے پر مبارکباد دی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں