پاکستان اسٹاک: انڈیکس 54.43 پوائنٹس کی کمی سے 43572.67 پوائنٹس پر بند

304

 

 پاکستان اسٹاک: انڈیکس 54.43 پوائنٹس کی کمی سے 43572.67 پوائنٹس پر بند

 

کراچی پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) میں مندی کا رجحان رہا، کے ایس ای 100 انڈیکس 54.43 پوائنٹس کی کمی سے 43572.67 پوائنٹس پر بند ہوا، مارکیٹ سرمایہ میں 45 ارب 62 کروڑ 15 لاکھ 16 ہزار 528 روپے کی کمی رہی جبکہ تجارتی حجم میں بھی 71 کروڑ 40 لاکھ 30 ہزار 868 روپے کی مندی ریکارڈ کی گئی۔

اسی طرح خرید و فروخت میں 2 کروڑ 16 لاکھ 43 ہزار 340 حصص کی کمی رونماء ہوئی۔ تفصیلات کے مطابق نئے کاروباری ہفتے کے آغاز پر پیر کو پی ایس ایکس میں مندی کا رجحان رہا اورکے ایس ای 100 انڈیکس 54.43 پوائنٹس کی کمی سے 43572.67 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ کے ایس ای 30 انڈیکس بھی 0.79 پوائنٹس کی مندی سے 21849.79 پوائنٹس پر بند ہوا۔ مزیدبرآں کے ایس سی آل شیئر انڈیکس میں 153.75 پوائنٹس کی کمی رونماء ہوئی

جبکہ کے ایم آئی 30 انڈیکس میں 4 پوائنٹس کی مندی ریکارڈ کی گئی۔ اسی طرح بینکس ٹریڈ ایبل (بی اے ٹی آئی) انڈیکس 11.08 پوائنٹس کی کمی سے 17597.56 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ آئل اینڈ گیس ٹریڈ ایبل (او جی ٹی آئی) انڈیکس 75.69 پوائنٹس کی مندی سے 19669.04 پوائنٹس پر بند ہوا۔ پی ایس ایکس – کے ایم آئی انڈیکس 42.22 پوائنٹس کی مندی سے 21322.96 پوائنٹس پر بند ہوا۔ مارکیٹ میں مجموعی طور پر 370 کمپنیوں کے حصص کا لین دین ہوا جن میں سے 140 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 205 کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں مندی اور 25 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ سب سے زیادہ تیزی ہینوپاک موٹرز کے حصص کی قیمت میں ہوئی جس کے حصص کی قیمت 35.49 روپے کے اضافے سے 1210.99 روپے پر بند ہوئی۔

اسی طرح ویتھ پاک لمیٹڈ کے حصص کی سودے بھی 35.09 روپے کی تیزی سے 1814 روپے پر بند ہوئے۔ سب سے زیادہ مندی رفحان میز پروڈکٹس اور پاک ٹوبیکو کے حصص کی قیمتوں میں ہوئی۔ رفحان میز پروڈکٹس کے حصص کی قیمت 200 روپے کی مندی سے 7000 روپے اور پاک ٹوبیکو کے حصص کی قیمت بھی 101.94 روپے کی کمی سے 1936.96 روپے رہ گئی۔ سب سے زیادہ کاروبار فوجی فرٹیلائیزر لمیٹڈ کے حصص میں ہوا جو 98 لاکھ 4 ہزار 500 شیئرز رہا جس کی قیمت 27.44 روپے سے شروع ہو کر 27.44 روپے پر ہی بند ہوئی جبکہ ٹی آر جی پاکستان لمیٹڈ کے 74 لاکھ 99 ہزار حصص کے سودے 36.65 روپے سے شروع ہو کر 35.37 روپے پر بند ہوئے۔

مجموعی طور پر 12 کروڑ 67 لاکھ 14 ہزار 720 حصص کا کاروبار ہوا جس کا تجارتی حجم 5 ارب 12 کروڑ 48 لاکھ 21 ہزار 620 روپے رہا۔ مارکیٹ کیپیٹل 90 کھرب 51 ارب 46 کروڑ 20 لاکھ 65 ہزار 282 روپے سے کم ہو کر 90 کھرب 5 ارب 83 کروڑ 65 لاکھ 48 ہزار 754 روپے رہ گیا۔ فیوچر ٹریڈنگ میں 121 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 68 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں مندی اور 3 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا جبکہ 11 کروڑ 48 لاکھ 63 ہزار 500 حصص کا کاروبار ہوا۔

mm
قاضی جاوید سینئر کامرس رپورٹر اور کامرس تجزیہ، تفتیشی، اور تجارتی و صنعتی،معاشی تبصرہ نگار کی حیثیت سے کام کرنے کا وسیع تجربہ رکھتے ہیں ۔ جسارت کے علاوہ نوائے وقت میں ایوان وقت ،اور ایوان کامرس بھی کرتے رہے ہیں ۔ تکبیر،چینل5اور جرءات کراچی میں بھی کامرس رپورٹر اور ریڈیو پاکستان کراچی سے بھی تجارتی،صنعتی اور معاشی تجزیہ کر تے ہیں qazijavaid61@gmail.com