راؤ انوار نے ظلم کیا، میرا بیٹا بے گناہ تھا‘ والد نقیب اللہ محسود

228
اسلام آباد: نقیب قتل کیس کی سماعت کے بعد والد میڈیا سے گفتگو کر رہے ہیں، چھوٹی تصویر میں آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ عدالت عظمیٰ آ رہے ہیں
اسلام آباد: نقیب قتل کیس کی سماعت کے بعد والد میڈیا سے گفتگو کر رہے ہیں، چھوٹی تصویر میں آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ عدالت عظمیٰ آ رہے ہیں

اسلام آباد (آن لائن) کراچی میں پولیس مقابلے میں ماورائے عدالت قتل کیے گئے نقیب اللہ محسود کے والد کا کہنا ہے کہ ان کا بیٹا بے گناہ تھا اور راؤ انوار نے ظلم کیا۔ عدالت عظمیٰ میں پیشی کے موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے نقیب اللہ کے والد کا کہنا تھا کہ پولیس افسر راؤ انوار کے ظلم کے خلاف عدالت عظمیٰ آئے ہیں‘ ہمیں عدالت عظمیٰ سے انصاف چاہیے اور ان شاء اللہ انصاف ملے گا۔ خیال رہے کہ 13 جنوری کو ملیر کے علاقے شاہ لطیف ٹاؤن میں سابق ایس ایس پی ملیر راؤ انوار نے نوجوان نقیب اللہ محسود کو دیگر
3 افراد کے ہمراہ دہشت گرد قرار دے کر مقابلے میں مار دیا تھا۔