بجلی کی قیمت میں اضافے کیخلاف حافظ نعیم نے درخواست جمع کرادی

336

کراچی ( اسٹاف رپورٹر) سندھ ہائیکورٹ نے بجلی کی قیمت میں اضافے کے خلاف جماعت اسلامی کی درخواست پر فریقین کو نوٹس جاری کردیے۔ 2 رکنی بینچ کے روبرو بجلی کی قیمت میں اضافے کے خلاف جماعت اسلامی کی درخواست کی سماعت ہوئی۔جماعت اسلامی کراچی کے امیرحافظ نعیم الرحمن نے درخواست قاسط نواز ایڈووکیٹ کے توسط سے دائر کی۔ جماعت اسلامی کے وکیل نے کہا کہ کے الیکٹرک نے نیپرا سے بجلی کے نرخ میں اضافے کے لیے رجوع کیا۔ کے الیکٹرک کا اس سال کا ڈکلیئر منافع 32 ارب روپے ہے۔ وفاقی حکومت نے بھی کے الیکٹرک کو 22 ارب روپے کی سبسڈی دی۔ کے الیکٹرک کو 450 میگاواٹ بجلی وفاق دے رہا ہے۔ کے الیکٹرک پر عوام سے وصول شدہ 200 ارب روپے بھی واجب الادا ہیں۔ کے الیکٹرک کی جانب سے بجلی کی قیمت میں اضافے کا کوئی جواز نہیں۔ درخواست میں استدعا کی گئی کہ بجلی کی قیمت میں حالیہ اضافہ کالعدم قرار دیا جائے۔ دائر درخواست میں وفاقی حکومت،نیپرا اور کے الیکٹرک کو فریق بنایا گیا ہے۔ عدالت نے فریقین کو بوٹس جاری کرتے ہوئے 20 دسمبر تک جواب جمع کرانے کا حکم دے دیا۔