صوبے میں امن حکومت کی اولین ترجیح ہے‘وزیراعلیٰ بلوچستان

98
کوئٹہ، وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کڈنی ڈے کے حوالے سے اسکریننگ کیمپ کا افتتاح کررہے ہیں
کوئٹہ، وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کڈنی ڈے کے حوالے سے اسکریننگ کیمپ کا افتتاح کررہے ہیں

کوئٹہ(نمائندہ جسارت) وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا ہے کہ بلوچستان حکومت کی ترجیحات میں امن وامان کی بحالی سرفہرست ہے، اس سلسلے میں ہماری کوشش اور کامیابی سب پر عیاں ہے۔ بلوچستان حکومت نے پولیس اور دیگر قانون نافذ کرنے والے دیگر اداروں کی تربیت ودیگر معاملات کی بہتری کے لیے بہت سے اقدامات اٹھائے ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اے ٹی ایف ٹریننگ اسکول میں پاسنگ آؤٹ پریڈ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔تقریب میں صوبائی وزیر میر نصیب اللہ مری، رکن صوبائی اسمبلی اصغر خان اچکزئی،اعلیٰ حکام اور دیگر بھی موجود تھے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ حکومت نے پولیس کو جدیداسلحہ سے لیس اور اعلیٰ تربیت مہیا کرنے کے لیے ہرممکن معاونت مہیا کی ہے۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردی اور اغوا برائے تاوان کی روک تھام کے لیے پولیس امن اور عوام کی حفاظت کے لیے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرے گی اور ملک وقوم کے دشمنوں کاڈٹ کا مقابلہ کرتے ہوئے انہیں کیفرکردار تک پہنچائے گی۔علاوہ ازیں کڈنی کے امراض کے عالمی دن کے موقع پرکڈنی سینٹر میں افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت عوام کو صحت اور علاج معالجہ کی بہترین سہولتوں کی فراہمی کے لیے بھرپور اقدامات کررہی ہے حکومت گردوں کے امراض میں مبتلا افراد کے علاج معالجہ کے لیے تمام ضلعی ہیڈکوارٹر اسپتالوں میں ڈائیلائسز کی سہولت کی فراہمی کو یقینی بنارہی ہے جبکہ گردوں کے ٹرانسپلانٹ کے لیے غریب عوام کو مالی معاونت فراہم کی جائے گی۔گزشتہ روزوزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان سے افغانستان کے سفیر شکراللہ عاطف مشال نے ملاقات کی۔ملاقات میں وزیراعلیٰ نے افغان سفیر سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ خطے میں امن کے قیام اور معاشی سرگرمیوں کے فروغ سے ہی غربت کا خاتمہ ممکن ہے،سی پیک خطے کے لیے ایک گیم چینجر ہے، پر امن افغانستان خطے کے مفاد میں ہے ۔ ملاقات میں پاک افغان معاشی تعلقات سمیت باہمی دلچسپی کے دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ تاپی گیس پائپ لائن کا منصوبہ ہمسایہ ممالک کے بہترین مفاد میں ہے۔اس موقع پرافغان سفیر نے کہا کہ دونوں ممالک دہشت گردی سے متاثر ہیں، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان اہم کردار ادا کررہا ہے۔دونوں رہنماؤں نے معاشی تعلقات کے فروغ پراتفاق کیا۔