پاکستان سپر لیگ کے انتظامات میں کرپشن کا انکشاف،

74

کراچی (رپو رٹ:منیر عقیل انصاری)پاکستان سپر لیگ کے انتظامات میں کرپشن کا انکشاف، نیب نے تحقیقات شروع کردیں ،گزشتہ سال پی ایس ایل تھری کے ٹھیکہ میں کرپشن پر انکوائری شروع کی گئی ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ پی ایس ایل کے لئے شہر کو سجانے کی ذمہ داری کے ایم سی کو سونپی گئی تھی۔ 

کے ایم سی نے ساڑھے گیارہ کروڑ تینتالیس لاکھ کا کام من پسند شخص کو جاری کیا ہے۔گیارہ کروڑ سے زائد کا ٹھیکہ میڈیا ورلڈ نامی کمپنی کو دیا گیا،سنجے پروانی نامی شخص کے کہنے پر دیا ٹھیکہ میڈیا ورلڈ نامی کمپنی کو ٹھیکہ جاری ہوا ہے۔ 

ذرائع کا کہنا ہے کہ سنجے پروانی میئر کراچی وسیم اختر کے قریبی دوست ہیں۔ ذرائع نیب نے کنٹریکٹر کیون رائے کو تفتیش کے لئے طلب بھی کیاگیا ہے۔ 

نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ کے ایم سی کا کام ہے ٹھیکوں میں شفافیت قائم رکھے، کنٹریکٹر کا نہیں ہے۔

اس حوالے سے میئر کراچی وسیم اختر کا کہنا ہے کہ اس سال بھی کیون رائے نے پی ایس ایل چار میں کام حاصل کرنے کے لئے درخواست دی تھی۔ 

دوسری جانب وزیر بلدیات سندھ سعید غنی کا کہنا تھا کہ سجاوٹ کا کام مفت میں کرنے کے خواہشمندوں کو دیا گیا ہے جن کی حکومت ہر ممکن مدد بھی کرے گی۔

اس سال سجاوٹ پر بمشکل دو کروڑ کے لگ بھگ اخراجات آسکتے ہیں۔