سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کی ملی بھگت سے بیشتر علاقوں میں درجنوں رہائشی پلاٹوں پر خلاف ضابطہ تعمیرات کا سلسلہ عروج پر پہنچ گیا ہے،

116

کراچی(رپورٹ:منیر عقیل انصاری) سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے افسران کی ملی بھگت سے نارتھ کراچی کے بیشتر علاقوں بالخصوص ناگن چورنگی اور یوپی سوسائٹی میں درجنوں رہائشی پلاٹوں پر خلاف ضابطہ تعمیرات کا سلسلہ عروج پر پہنچ گیا ہے جس سے علاقہ مکینوں کو فراہم کی جانے والی بنیادی سہولیات چھن رہی ہیں۔

علاقہ کا انفرااسٹیکچر تباہ ہورہا ہے اور انسانی جانوں کو خطرہ پیدا ہوگیا ہے۔ علاقے سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق ایس بی سی اے نیو کراچی کے افسران کی ملی بھگت سے نیوکراچی یوپی سوسائٹی سیکٹر الیون ای میں تین پرانی عمارتوں پر اضافی منزلیں تعمیر کرلی گئی ہیں،

اسی طرح سیکٹر الیون ایچ میں ناگن چورنگی کے قریب ایک رہائشی پروجیکٹ کی دکانیں توڑ کر بینکویٹ تعمیر کردیا گیا ان تعمیرات سے مزکورہ عمارتوں اور فلیٹ کو شدید خطرات لاحق ہوگیا ہے،

علاقہ مکینوں کا کہنا ہے کہ ایس بی سی اے افسران کی ملی بھگت سے رہائشی پلاٹوں پر دکانیں اور پورشنز کی مسلسل تعمیرات سے سیوریج اور پانی کے مسائل میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے، 

مکینوں نے ڈائریکٹر جنرل ایس بی سی اے سے اپیل کی ہے کہ وہ فوری ایکشن لیں بصورت دیگر علاقہ مکین ایس بی سی اے ہیڈ آفس کے سامنے احجاج کرنے پر مجبور ہونگے،