کالعدم تنظیموں کے خلاف کریک ڈاؤن شروع

65

اسلام آباد:حکومت نے کالعدم تنظیموں کےخلاف کریک ڈاؤن کرتے ہوئے مفتی عبدالرؤف اورحماد اظہر سمیت 44 ارکان کو حراست میں لے لیا۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی نے سیکریٹری داخلہ کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس کی۔ اس موقع پر سیکریٹری داخلہ نے گفتو کرتے ہوئے کہا کہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کرتے ہوئے کالعدم تنظیموں کے 44 افراد کو حفاظتی تحویل میں لے لیا ہے، حراست میں لیے گئے افراد میں مفتی عبدالرؤف اور حماد اظہر بھی شامل ہیں۔

سیکریٹری داخلہ نے کہا کہ ان میں کچھ ایسے لوگ بھی ہیں جن کا بھارتی ڈوزیئرمیں ذکر تھا، اس آپریشن میں تمام کالعدم تنظیموں کیخلاف کارروائی کی جارہی ہے۔

واضح رہے مفتی عبدالرؤف کالعدم جیش محمد مولانا مسعود اظہر کے بھائی ہیں۔

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے شہریار آفریدی نے کہا کہ ہم کسی دباؤ کے تحت نہیں بلکہ اپنی ذمہ داری سمجھ کر یہ کارروائی کررہے ہیں، انہوں نے کہا کہ پاکستان کی سرزمین کسی کیخلاف استعمال نہیں ہوگی، انہوں نے کہا کہ یہ تاثر نہیں ہونا چاہیے کہ کسی ایک تنظیم کیخلاف آپریشن ہورہا ہے، ہم کسی دباؤ میں یہ نہیں کررہے۔