حمزہ بن لادن کی سعودی شہریت منسوخ

258

ریاض: سعودی عرب کی جانب سے حمزہ بن لادن  کی سعودی شہریت منسوخ کردی گئی ہے۔

عرب میڈیاکے مطابق اسامہ بن لادن   کےبیٹے حمزہ بن لادن کی سعودی شہریت کو منسوخ کرنے کا فیصلہ سعودی فرماں رواں نے نومبر میں کیا تھا جس کا اعلان گزشتہ روز سعودی وزارت خارجہ نے کیا۔

واضح رہے کے گزشتہ  روز امریکی حکام کی جانب سے اس بات کا اعلان کیا گیا تھا کے اسامہ بن لادن کے 30 سالہ بیٹہ حمزہ بن لادن کے بارے میں معلومات فراہم کرنے والے شخص کو ایک ملین ڈالر انعام میں دیا جائے گا۔

امریکی دفتر خارجہ کے مطابق حمزہ بن لادن  کا نام دو سال قبل دہشت گردوں کی فہرست میں شامل کر دیا گیا تھا۔

القاعدہ کے اہم رہنما کے طور پر ابھرے ہیں اور انھوں نے رواں سالوں میں اپنے والد کی موت کا بدلہ لینے کے لئے  آڈیو اور ویڈیو پیغامات جاری کیے ہیں جس میں انہوں نے امریکہ اور اس کے حامی مغربی ممالک پر حملہ کرنے کی دعوت دی ہے۔

حمزہ بن لادن کے مصدقہ ٹھکانے کے بارے میں امریکہ کے پاس کوئی اطلاعات موجود نہیں ہیں البتہ امریکی حکام کا خیال ہے کہ وہ پاکستان افغانستان بارڈر کے قریب کسی جگہ پر مقیم ہے اور وہ ایران بھی جا سکتے ہیں۔

 یاد رہے کےحمزہ بن لادن اسامہ بن لادن کی تیسری اہلیہ خیریہ صابر کے بیٹے ہیں اور وہ اپنے والد کی مشن کی تکمیل اور قتل کا بدلہ لینے کا اعلان کرچکے ہیں ۔