پشاور ہائی کورٹ کے جج جسٹس محمدایوب خان ڈرائیورسمیت قاتلانہ حملے میں زخمی 

336
پشاور: ہائیکورٹ کے جج محمد ایوب مروت کی گاڑی پر حملے کے بعد سیکورٹی اہلکار جائے وقوع کا معائنہ کررہے ہیں
پشاور: ہائیکورٹ کے جج محمد ایوب مروت کی گاڑی پر حملے کے بعد سیکورٹی اہلکار جائے وقوع کا معائنہ کررہے ہیں

پشاور(اے پی پی)پشاور کے علاقے حیات آباد میں نامعلوم افراد کے قاتلانہ حملے میں پشاور ہائی کورٹ کے جج اور ان کا ڈرائیور زخمی ہو گیا۔ تفصیلات کے مطابق پشاور ہائی کورٹ کے جج جسٹس محمدایوب خان اپنی گاڑی میں جمعرات کے روز اپنی رہائش گاہ واقع فیز 5 حیات آباد سے نکل کر پشاور ہائی کورٹ جا رہے تھے کہ گھر سے کچھ ہی فاصلے پر نامعلوم حملہ آوروں نے ان کی گاڑی پر فائرنگ کر دی جس سے وہ خود اور ان کے ڈرائیور زخمی ہو گئے ، دو نوں زخمیوں کو قریبی اسپتال منتقل کیا گیا۔ پولیس ذرائع کے مطابق ملزمان پیدل تھے اور واردات کے بعد فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے ، ملزمان کی تلاش کے لیے سرچ آپریشن کیا جا رہا ہے ، جائے وارادت سے کلاشنکوف اور نائن ایم ایم کے خول ملے ہیں۔
پشاور: ہائیکورٹ کے جج محمد ایوب مروت کی گاڑی پر حملے کے بعد سیکورٹی اہلکار جائے وقوع کا معائنہ کررہے ہیں