عافیہ کی سزا پاکستان میں پوری ہونے سے فیملی کو سہولت مل جائے گی،وزیر خارجہ

92

ملتان(آئی این پی)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ امریکا میں قید عافیہ صدیقی کی بقیہ سزا اگر یہاں پوری ہو تو ان کی فیملی کو سہولت مل جائے گی۔ ملکوں کے درمیان سودے نہیں ہوتے۔ شکیل آفریدی سے متعلق ہمارا اپنا موقف ہے، ہم سمجھتے ہیں کہ شکیل آفریدی نے پاکستان کے مفادات کے خلاف کام کیا ۔ بھارتی سیاستدان پاکستان کو نشانہ بناکر الیکشن جیتنا چاہتے ہیں، مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فائرنگ کی مذمت کرتے ہیں ، ایل او سی پر بھارتی فائرنگ مسئلہ کشمیر سے توجہ ہٹانے کی مذموم کوشش ہے۔ وہ ہفتہ کو ملتان میں میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ نیب کے مقدمات تحریک انصاف کی حکومت سے پہلے
کے ہیں۔ نیب آزاد ادارہ ہے ہم کسی بھی طرح اثر انداز نہیں ہو سکتے۔ نیب مقدمات سے تحریک انصاف کا کوئی تعلق نہیں ہے۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ بھارت سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزیاں کر رہا ہے جس کی مذمت کرتے ہیں۔ پی پی اور (ن) لیگ سے گزارش ہے کہ مفادات سے بلاتر ہو کر خطے کے مفاد کے لیے سوچیں۔ پیٹرول کی قیمت تب نیچے آئے گی جب خطے کے حالات ٹھیک ہوں گے۔ ایک سوال کے جواب میں میں انہوں نے کہا کہ چودھری سرور والا معاملہ میرے علم میں نہیں ہے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان افغانستان میں امن کا خواہاں ہے۔ صدر اشرف غنی اور وزیر خارجہ سے مذاکرات ہوئے۔ پاکستان نے ماسکو امن کانفرنس میں شرکت کی۔ پاکستان چاہتا ہے کہ یمن میں امن قائم ہو۔ ذخائر بڑھیں گے تو معیشت مستحکم ہو گی۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ عافیہ صدیقی کی رہائی کے لیے سفارتی سطح پر کوششیں کر رہے ہیں۔ امریکی حکام سے کہا ہے کہ عافیہ صدیقی کو قانونی حق دیا جائے۔ ہمارا اپنا اور امریکاکا اپنا موقف ہے۔ عافیہ صدیقی کی سزا پاکستان میں پوری ہو تو ان کی فیملی کو سہولت مل جائے گی۔امریکی اہلکار ریمنڈ ڈیوس کے بدلے عافیہ صدیقی کی رہائی کی پیشکش نہیں کی گئی تھی۔ انہوں نے کہا کہ شکیل آفریدی نے پاکستان کے مفادات کیخلاف کام کیا۔ عافیہ صدیقی اور شکیل آفریدی جیسے معاملات میں سودے بازی نہیں ہوتی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.