شہباز کی گرفتاری جمہوریت پر حملہ ہے ،شاہد خاقان عباسی

44

لاہور (این این آئی)ن لیگ کے رہنماؤں نے شہباز شریف کی گرفتاری اور وزیر اعظم عمران خان کی پریس کانفرنس پر اپنے سخت رد عمل کا اظہار کیا ہے۔سابق وزیر اعظم و حلقہ این اے 124سے ن لیگ کے امیدوار شاہد خاقان عباسی اپنی انتخابی مہم کے دوران کہا ہے کہ شہباز شریف کی گرفتاری جمہوریت اور پارلیمان پر حملہ ہے ،ہم جلاؤ گھیراؤکی سیاست نہیں چاہتے ، قوم کی خدمت کرنے والے جیلوں میں ہیں اور ملک لوٹنے والے بر سر اقتدار ہیں۔بزدل حکمرانوں کو معلوم ہے کہ ضمنی انتخابات میں ن لیگ کو شکست نہیں دی جاسکتی اس لیے بوکھلاہٹ میں کارروائیاں کر رہے ہیں ،شریف فیملی نے جمہویت کے لیے پہلے بھی جیلیں کاٹ چکے ہیں۔مسلم لیگ (ن )کے مرکزی رہنما رانا تنویر حسین نے کہا ہے کہ عمران خان حکومت گرانا کوئی مسئلہ نہیں،ہم چاہتے ہیں حکومت اپنی مدت پوری کرے، انہوں نے کہا کہ پہلے نواز شریف اور اب شہباز شریف کو گرفتار الیکشن پر اثر انداز ہونے کے لیے کی گئی، عمران خانے ٹولے کی انتقامی کارروائی کا جواب پارلیمنٹ کے اندر سڑکوں پر دیں گے۔ مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما و حلقہ این اے 131سے نامزد امیدوار خواجہ سعید رفیق نے کہاکہ شہباز شریف کی گرفتاری بزدل حکمرانوں کی ہار ہے بزدل ہمیشہ پیچھے سے شیر سامنے سے وار کرتا ہے ،عمران خان تم اپنی ہر حسرت اور شوق پورا کرلو لیکن جب گرو گے تمہیں کوئی اٹھانے بھی نہیں آگئے،عمران خان دانشمندہوتا تو وعدے پورے کرتا انتقامی کارروائی نہیں۔ پاکستان مسلم لیگ (ن)کی ترجمان مریم اور نگزیب نے وزیر اعظم عمران خان کی پریس کانفرنس پر اپنے رد عمل میں کہا ہے کہ شہباز شریف کی گرفتاری کے پہلے ہی دن آپ کی گھبراہٹ عیاں ہے ٗعوام کو بتائیں کہ خیبر پختونخواکا45ارب کالیاگیا قرض کہاں گیا؟، 65 ارب کی بجلی چوری کیوں نہیں پکڑی؟ ٗ2017 اور 2018 میں کے پی کے حکومت کا کل 55ارب روپے کا خسارہ تھا ٗاس کے بارے میں قوم کو کب بتائیں گے؟مریم اور نگزیب نے کہا کہ جسٹس (ر) وجیہہ ، جنرل (ر) حامدخان اور اکبر بابر نے پی ٹی آئی کے اندر جس کرپشن کی نشاندہی کی تھی ٗاس پر کارروائی کرنے کے بجائے انہی ہی کونشان عبرت کیوں بنادیاگیا؟ دوبئی میں 60ارب روپے کی جائیداد عمران خان کی بہنوں کی ہے جن کا کوئی ذریعہ آمدن نہیں ٗان کی تحقیقات کب شروع کریں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ