پاکستانی طالبان کے ریاست سے لڑنے کو کبھی جائز قرار نہیں دیا ٗ مولانا سمیع الحق 

47

اسلام آباد (این این آئی) جمعیت علمائے اسلام (س)کے سربراہ مولانا سمیع الحق نے واضح کیا ہے کہ پاکستانی طالبان کی جانب سے ریاست کیخلاف لڑنے کو کبھی جائز قرار نہیں دیا ٗعمران خان کے خیالات افغانستان کے مسئلے اور جہاد پر میرے قریب تھے ٗعمران خان مدارس کے حوالے سے کوئی غلط اقدام اٹھانے کی جرات نہیں کریگا اگر ایسا ہوا تو حکومت کو ایک ہفتے کی مہلت بھی نہیں دینگے ٗفی الحال مدارس کا کوئی ایشو نہیں اس پر سیاست ہورہی ہے ٗ افغان طالبان سے مذاکرات کیلیے ثالثی کا کر دار ادا
کر نے کیلیے تیار ہوں ٗاگر امریکاافغانستان سے نکل جائے تو مسئلہ حل ہو جائیگا ٗافغانستان کے ساتھ ہماری سرحد کھلی چاہیے ٗپاکستان میں مقیم افغانیوں اور بنگالیوں کو شہریت ملنی چاہیے ٗوزیر اعظم کی تجویز کی بھرپور حمایت کرتا ہوں ٗ امریکانے افغانستان میں جہاد کو ختم کر نے کیلیے ہر حربہ استعمال کیا مگر کامیاب نہیں ہوسکا ٗدہشتگردی حرام ہے ٗاگر بھارتی جاسوس کلبھوشن کو پھانسی پر چڑھایا ہوتا تو آج انڈیا بڑھکیں نہ مارتا ٗداعش کے پشت پر امریکاہے ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ