کرپشن کسی صورت برداشت نہیں کرینگے،عام آدمی کو ریلیف دینا ترجیح ہے،وزیراعظم

143

اسلام آباد/ لاہور (خبر ایجنسیاں) وزیرِاعظم عمران خان نے کہا ہے کہ شعبہ تعلیم میں اصلاحات کا بنیادی مقصد مدرسے کے بچوں کو اوپر لانا ہے‘ قانون، عدالتی نظام میں اصلاحاتی پیکج کو جلد حتمی شکل دی جائے گی‘ غیر ملکی سرمایہ کاری کا تحفظ کیا جائے گا‘سعودی سرمایہ کاری کا خیرمقدم کرتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کو وزارت قانون کے اجلاس سے خطاب، علما کے وفد، چیف ایگزیکٹو اشمورے گروپ اور ایگزیکٹو ڈائریکٹر نیوٹیک سے علیحدہ علیحدہ ملاقات میں کیا۔ تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نے وزارت قانون کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ کریمنل جسٹس کے نظام میں اصلاحات کے لیے حکومت پرعزم ہے‘ تیز ترین انصاف کے لیے عدلیہ اور شہریوں کو سہولیات کا طریقہ کار وضع کر رہے ہیں‘ قانون اور عدالتی نظام میں اصلاحاتی پیکیج کو جلد حتمی شکل دی جائے۔اس موقع پر وزیر قانون ڈاکٹر فروغ نسیم نے وزیر اعظم کو بریفنگ دی۔ وزیر اعظم نے کہا کہ تیز ترین انصاف کی فراہمی تحریک انصاف کے ایجنڈے کاحصہ ہے‘ تیز ترین انصاف کے لیے اہم اقدامات کیے جائیں گے۔ اس موقع پر ڈاکٹر فروغ نسیم نے عمران خان کو یقین دلایا کہ پلان آف ایکشن سے متعلق مربوط اور مکمل اصلاحاتی پیکج100دن سے قبل ہی مکمل کرلیا جائے جیساکہ وزیراعظم کا اپنی قوم سے وعدہ ہے۔ دریں انثا وزیر اعظم نے علما کرام کے وفد سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نظامِ تعلیم اور نصاب تعلیم کی بہتری پی ٹی آئی حکومت کی اولین ترجیح ہے‘ شعبہ تعلیم میں اصلاحات کا بنیادی مقصد تفریق کاخاتمہ اور مدرسے کے بچے کو اوپر لانا ہے‘ مدارس کو درپیش تمام مسائل باہمی مشاورت سے حل کریں گے۔ وفد میں مفتی منیب الرحمان، مولانا محمد حنیف جالندھری، صاحبزادہ عبدالمصطفیٰ ہزاروی، مولانا یاسین ظفر، مولانا عبدالمالک، ڈاکٹر مولانا عطا الرحمن اور مولانا سید قاضی نیاز حسین نقوی شامل تھے۔ وزیرِاعظم نے کہا کہ مدرسوں کی خدمات کو نظر انداز کرنا اور ان کو دہشت گردی سے منسوب کرنا ناانصافی ہے‘ مدارس کو درپیش تمام مسائل باہمی مشاورت سے حل کریں گے‘ سعودی عرب کے ساتھ پاکستان کا مضبوط رشتہ ہے ‘ سعودی عرب نے ہمیشہ پاکستان کی مشکل وقت میں مدد کی ہے اور سعودی عرب کی طرف سے انویسٹمنٹ اور تجارتی تعاون کا خیر مقدم کرتے ہیں۔ علاوہ ازیں وزیر اعظم نے ایگزیکٹو ڈائریکٹر ’’نیوٹیک‘‘ ذوالفقار احمد چیمہ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نوجوانوں کو ہنر سکھانے اور باعزت روزگار کی فراہمی پی ٹی آئی حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے‘ نوجوانوں کو سی پیک سے متعلقہ شعبوں میں تربیت کی فراہمی پر خصوصی توجہ دی جائے‘ قطر میں فٹ بال ورلڈ کپ اور ایکسپو کے حوالے سیپیدا ہونے والی ملازمتوں کے لیے بھی پاکستانی ہنرمندوں کو تیار کیا جائے۔ دریں اثناوزیراعظم عمران خان نے چیف ایگزیکٹو اشمورے گروپ مارک کومبز سے ملاقات میں کہا کہ حکومت غیر ملکی سرمایہ کاروں کو ہر قسم کی سہولیات کی فراہمی کے لیے پرعزم ہے‘ توانائی اور مالیاتی شعبوں سمیت ملک کے مختلف علاقوں کی سماجی و اقتصادی لحاظ سے بہتری کے لیے سرمایہ کاری کا تحفظ کیا جائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ