پاک فوج اقتصادی ترقی کیلئے پر امن ماحول فراہم کرے گی،جنرل قمر باجوہ

150
اسلام آباد: پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر باجوہ تین روزہ عالمی کانفرنس سے خطاب کررہے ہیں
اسلام آباد: پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر باجوہ تین روزہ عالمی کانفرنس سے خطاب کررہے ہیں

راولپنڈی (اے پی پی،صباح نیوز) پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ چیلنجوں سے نمٹنے کے لیے اداروں کو مل کر کردار کرنا ہوگا،مسلح افواج اور قوم نے ملک میں امن کی بحالی کے لیے بڑی قربانیاں دی ہیں، اپنی بقاء کے لیے مزید چوکنا رہنا اور درست سمت میں آگے بڑھنا ہوگا، مشکل وقت گزر چکا، اگلا مرحلہ امن کی مکمل بحالی کا ہے۔وہ ایئر یونیورسٹی میں سکیورٹی کے موضوع پر سیمینار سے خطاب کر رہے تھے ۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق جنرل قمر جاوید باجوہ نے تقریب میں قومی سلامتی، داخلی اور خارجی صورتحال پر تفصیلی روشنی ڈالی۔پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ نے دہشت گردی کو قوم کی حمایت سے مکمل طور پر ختم کرنے کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے واضح کیاہے کہ خطرات سے نمٹنے کے لیے تمام ریاستی اداروں کی قومی سطح پر ہم آہنگی ضروری ہے۔انہوں نے کہا کہ ملک میں استحکام کے لیے پاکستانی فوج اور قوم نے بڑی قربانیاں دی ہیں۔انہوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ پر امن ماحول اور معاشی و سماجی و ترقی کے لیے فوج کو جو بھی کرنا پڑا کرے گی۔انہوں نے کہا کہ پاک فوج اقتصادی ترقی کے لیے ملک میں محفوظ ماحول فراہم کرے گی اور بہتر سکیورٹی ماحول کے لیے اپنا کردار ادا کرتی رہے گی، قوم کی بھرپور حمایت سے دہشتگردی کو مؤثر انداز میں روکا گیا، ملک کو درپیش خطرات کے لیے ہمہ وقت تیار رہنا ہوگا۔قبل ازیں پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ ایئر یونیورسٹی پہنچے تو پاک فضائیہ کے سربراہ ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان اور وائس چانسلر ائیر یونیورسٹی وائس ائیر مارشل (ر) فیض عامر نے ان کا استقبال کیا ۔علاوہ ازیںآرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے امریکا کے نئے ناظم الامورپاؤل جونز نے جمعرات کو جی ایچ کیو میں ملاقات کی ،آئی ایس پی آر کے مطابق ملاقات میں علاقائی سیکورٹی خاص کر افغانستان کی صورتحال سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا،اس موقع پر امریکی ناظم الامور نے علاقے کے اندر کشیدگی سے بچاؤکے لیے پاکستان کے کردار کا اعتراف کیا اور ان کی تعریف کی ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ