ایران کیخلاف کوششیں جاری رکھنے کیلیے سعودی عرب پُرعزم

88
نیویارک: سعودی وزیر خارجہ عادل جبیر یمن کے لیے عالمی ایلچی مارٹن گریفتھ سے گفتگو کررہے ہیں
نیویارک: سعودی وزیر خارجہ عادل جبیر یمن کے لیے عالمی ایلچی مارٹن گریفتھ سے گفتگو کررہے ہیں

نیو یارک (انٹریشنل ڈیسک) سعودی وزیر خارجہ عادل جبیر نے امریکی خارجہ تعلقات کونسل میں ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کا ملک ایران اور لبنانی شیعہ ملیشیا حزب اللہ کو یمن پر تسلط جمانے کی اجازت ہرگزنہیں دے گا۔ دوسری جانب سعودی زیر قیادت اتحادی فوج کے فضائی حملے میں حوثیوں کے ایلیٹ کمانڈر سمیت 15 باغی مارے گئے۔ عرب ٹی وی کے مطابق بدھ کے روز امریکا میں اپنے خطاب میں سعودی وزیر خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب اپنی جنوبی سرحد پر حزب اللہ اور ایران کے بڑھتے اثرو نفوذ کو ختم کرنے کی کوششیں جاری رکھے گا۔ انہوں نے حوثیوں پر یمن کے جنگ سے متاثرہ علاقوں میں امداد کی فراہمی کی کوششوں میں رخنہ ڈالنے اور عالمی ادارہ صحت کے قافلوں کو لوٹنے کا الزام عائد کیا۔ عادل جبیر نے کہا کہ حوثیوں نے 17 معاہدے کیے مگر ان میں سے ایک پر بھی عمل نہیں کیا۔ ان کا کہنا تھا
کہ یمن کے مسئلے کا فوجی نہیں بلکہ سیاسی حل ہی زیادہ مناسب ہے۔ حوثیوں کو یمن میں سیاسی عمل میں حصہ لینے کا حق ہے مگرانہیں پورے یمن پر اپنا تسلط جمانے کا کوئی حق نہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ فوجی کارروائی کا مقصد حوثیوں کو بات چیت پرمجبور کرنا ہے۔ شام کے بحران پر بات کرتے ہوئے عادل جبیر نے کہا کہ وہاں کی صورت حال انتہائی سنگین ہے۔ کسی نئے انسانی المیے کے رونما ہونے سے قبل شام کی جنگ ختم کی جانی چاہیے۔ شام میں روسی فوجی مداخلت نے زمینی صورت حال تبدیل کردی۔ سعودی عرب شام کے مسئلے کو جنیوا میں ہونے والی بات چیت کی روشنی میں حل کرنے کا خواہاں ہے۔ عادل جبیر نے اسرائیل کے ساتھ خفیہ تعلقات کی موجودگی کو من گھڑت پروپیگنڈہ قرار دیا اور کہا کہ صہیونی ریاست کے ساتھ ریاض کے کسی قسم کے تعلقات نہیں ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ سعودی عرب مشرق وسطیٰ میں دیر پا قیام امن، فلسطینیوں اور اسرائیلیوں کے درمیان بحران کے خاتمے اور دو ریاستی حل کا حامی ہے۔ اُدھر یمن کے ساحلی شہر حدیدہ میں عرب اتحادی فوج کے ایک فضائی حملے میں حوثیوں کی ایلیٹ یونٹ کے کمانڈر کیپٹن علی احمد المعوضی المعروف ابو مقدام اپنے 14 ساتھیوں سمیت ہلاک ہوگیا۔ یہ کارروائی مشرقی حدیدہ میں 10 کلومیٹر کے علاقے میں کی گئی۔ یمنی فوج کے ایک ذریعے کے مطابق المعوضی کو عرب اتحادی فوج کے طیاروں نے حوثیوں کے ٹھکانوں پر بمباری کے دوران نشانہ بنایا۔ اُدھر یمن سے عرب ٹی وی کے مطابق جنوبی حدیدہ میں حوثیوں کے ٹھکانوں بالخصوص زبید شہر اور الجراحی ضلع کے اطراف میں حوثیوں کے خلاف بھرپور کارروائی جاری ہے۔
ایران ؍ سعودی عرب

Print Friendly, PDF & Email
حصہ