ٹیکس محتسب کی خدمات سے فائدہ اٹھائے۔ طارق احد نواز

144

ریونیو کو بہتر کرنے کے لیے آسان اور سہل ٹیکس نظام اشد ضروری ہے۔ شیخ عامروحید

اسلام آباد : وفاقی ٹیکس محتسب سیکریٹریٹ کے ایڈوائز طارق احد نواز نے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کا دورہ کیا ور تاجر برادری سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ان کا ادارہ محکمہ ٹیکس کے خلاف ٹیکس شکایات میں متاثرین کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے مسلسل کوشاں رہتاہے لہذا تاجر برادری ٹیکس شکایات کے ازالے کیلئے وفاقی ٹیکس محتسب کی خدمات سے فائدہ اٹھائے۔ انہوں نے کہا کہ کوئی بھی متاثرہ ٹیکس دہندہ ریونیو ڈویژن کے کسی اقدام کے خلاف وفاقی ٹیکس محتسب کو تحریری شکایت کر سکتا ہے اور ان کا ادارہ ان کو فوری ریلیف فراہم کرنے کی کوشش کرے گا۔
اپنے ادارے کی کارکردگی پر روشنی ڈالتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سال 2017میں 30جون تک 1022شکایات موصول ہوئیں جن میں سے 892کو نمٹا یا گیا۔ اسی طرح سال 2018میں 30جون تک 901شکایات موصول ہوئیں جن میں سے 772کو نمٹالیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ 583شکایات میں سے 457 شکایات کا فیصلہ متاثرین کے حق میں کیا گیا اور صرف 126شکایات کا فیصلہ ان کے خلاف کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ جب کوئی شکایت کسی ٹیکس دہندہ سے وصول ہوتی ہے

اس کو ایف بی آر یا متعلقہ فیلڈ آفس کو بھیجا جاتا ہے اور ان کا جواب پھر متاثرہ ٹیکس دہندہ کو بھیجا جاتا ہے تا کہ وہ اپنا ردعمل دے سکے۔ انہوں نے کہا کہ اگر کوئی غلطی ثابت ہو جائے تو ایف بی آر کو اس کا ازالہ کرنے کی سفارش کی جاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کا ادارہ متاثرین کو مفت اپنی خدمات فراہم کرتا ہے اور ضرورت پڑنے پر ان کو شکایت درج کرنے میں معاونت بھی کرتا ہے۔
طارق احد نواز نے کہا کہ ان کے ادارے میں شکایت درج کرنے کا طریقہ کار بہت آسان ہے کیونکہ کوئی بھی متاثرہ ٹیکس دہندہ ذاتی طور پر، کوریئر سروس ، ای امیل، اور فیکس کے ذریعے اپنی شکایت درج کراسکتا ہے۔ اس کے علاوہ متاثرین وفاقی ٹیکس محتسب کی ویب سائٹ پر جا کر آن لائن بھی اپنی شکایات درج کر سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ان کا محکمہ ہر درج شدہ شکایت کی تصدیق کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شکایات کے ازالے کے نظام کو مزید بہتر کرنے کیلئے تاجر برادری اپنی تجاویز دے جن پر سنجیدگی سے غور کیا جائے گا۔
اپنے استقبالیہ خطاب میں اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر شیخ عامر وحید نے کہا کہ ٹیکس ریونیو کو بہتر کرنے کیلئے آسان اور سہل ٹیکس نظام کی تشکیل وقت کی اشد ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ گڈ گورننس کو فروغ دینے اور ٹیکس ریونیو کو بہتر کرنے کیلئے ایک مستعد اور فعال وفاقی ٹیکس محتسب کی موجودگی بہت ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ عدالتوں کے چکر لگانے کی بجائے متاثرہ ٹیکس دہندگان کو وفاقی ٹیکس محتسب سے سستا اور مفت انصاف ملنے سے نہ صرف شکایات میں کمی ہو گی اور ایف بی آر کی کارکردگی بہتر ہو گی بلکہ اس سے ملک کے ٹیکس ریونیو میں بھی خاطر خواہ اضافہ ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ ٹیکس دہندگان کے اربوں روپے ریفنڈ کی مد میں ایف بی آر کے پاس رکے رہتے ہیں اور محکمہ ان کو بروقت کلیئر کرنے میں ٹال مٹول سے کام لیتا رہتا ہے لہذا وفاقی ٹیکس محتسب ان رکے ہوئے ریفنڈز کی بروقت ادائیگی کرانے میں معاونت کرے جس سے ٹیکس دہندگان کو کافی ریلیف ملے گا۔
اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سینئر نائب صدر محمد نوید ملک، نائب صدر نثار مرزا، فاؤنڈر گروپ کے چیئرمین زبیر احمد ملک، باصر داؤد، میاں شوکت مسعود، افتخار انور سیٹھی، خالد چوہدری ، میاں خالد، میاں محمد رمضان اور دیگر نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا اور ٹیکس دہندگان کی شکایات کے جلد ازالے کیلئے مفید تجاویز پیش کیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ
mm
قاضی جاوید سینئر کامرس ریپورٹر اور کامرس تجزیہ، تفتیشی، اور تجارتی و صنعتی،معاشی تبصرہ نگار کی حیثیت سے کام کرنے کا وسیع تجربہ رکھتے ہیں ۔جسارت کے علاوہ نوائے وقت میں ایوان وقت ،اور ایوان کامرس بھی کرتے رہے ہیں ۔ تکبیر،چینل5اور جرءات کراچی میں بھی کامرس رپورٹر اور ریڈیو پاکستان کراچی سے بھی تجارتی،صنعتی اور معاشی تجزیہ کر تے ہیں qazijavaid61@gmail.com