وزیراعظم ہاؤس کی نیلام ہونے والی بھینسوں نے دودھ دینا کم کردیا

56

اسلام آباد(صباح نیوز)وزیراعظم ہاؤس کی جلد نیلام ہونی والی بھینسوں کا دودھ کم ہوگیا،باڑے میں5 نہیں 8 بھینسیں ہیں ۔ان بھینسوں کو جلد وزیراعظم ہاؤس سے آزادی ملنے والی ہے ۔ سینیٹ کی قائمہ کمیٹی اطلاعات ونشریات کے چیئرمین سینیٹر فیصل جاوید میڈیا ٹیم کو لے کر باڑے پر پہنچ گئے ۔میڈیا ٹیم نے بھینسوں کے ساتھ سیلفیاں بھی بنائیں۔ ان 8 بھینسوں کو وزیراعظم ہاؤس کے سابقہ گھوڑوں کے اصطبل میں رکھا گیا ہے ۔ بھینسیں نمائش کیلیے پیش کردی گئی ہیں ۔ گزشتہ روز سینیٹر فیصل جاوید کے ہمراہ میڈیا ٹیم نے وزیراعظم ہاؤس میں بھینسوں کے باڑے کا دورہ کیا ۔یہ پنجاب نسل کی دیسی بھینسیں ہیں ۔سابق
وزیراعظم میاں محمد نوازشریف کے دور میں ان کو وزیراعظم ہاؤس لایا گیا تھا ۔ تحریک انصاف کے رہنما نے بتایا کہ 5 نہیں 8 بھینسیں ہیں ۔اس موقع پر میڈیا ٹیم سے باڑے کے گوالے کو ملوایا گیا گوالے ظفراقبال نے بتایا کہ ان بھینسوں کا دودھ کم ہوگیا ہے ۔ میڈیا ٹیم کے استفسار پر معلوم ہوا کہ یہ بھینسیں معذول وزیراعظم نوازشریف کے دور میں ایک وقت میں 5سے 6لیٹر فی بھینس دودھ دیتی تھی جو کم ہوکر ساڑھے تین سے چار لیٹر رہ گیا ہے ۔ اس کی گوالے نے بھی تصدیق کی ۔سینیٹر فیصل جاوید نے بتایا کہ وزیراعظم ہاؤس کا یہ وہ حصہ ہے جہاں ماضی میں سابق وزیراعظم بے نظیر بھٹو کے شوہر آصف علی زرداری نے گھوڑوں کا اصطبل بنوایا تھا ۔ انہوں نے وہ وسیع سبزازار بھی دکھایا جہاں آصف علی زرداری گھوڑے دوڑاتے تھے ۔ فیصل جاوید کے مطابق یہ تمام آٹھ بھینسیں بہت زیادہ مشہور ہوگئیں ہیں اور ان کی قیمت بھی بڑھ گئی ہے۔
بھینسیں نیلام

Print Friendly, PDF & Email
حصہ