شمالی وزیرستان میں آپریشن کے دوران 3 جوان شہید، 4 دہشت گرد ہلاک

44

راولپنڈی (خبر ایجنسیاں) شمالی وزیرستان میں آپریشن کے دوران 4 دہشت گرد ہلاک جب کہ فائرنگ کے تبادلے میں 3 فوجی جوان شہید ہوگئے۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق سیکیورٹی فورسز نے شمالی وزیرستان میں انٹیلی جنس کی بنیاد پر آپریشن کیا جس کے نتیجے میں فعال دہشت گرد آفتاب سمیت 4 عسکریت پسند مارے گئے۔آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ آپریشن 12 ستمبر اور دسمبر 2017ء میں سیکیورٹی فورسز پر حملے کرنے والے دہشت گردوں کے خلاف کیا گیا، دسمبر 2017ء میں فوجی کانوائے پر حملے کے نتیجے میں لیفٹیننٹ معین شہید ہوگئے تھے۔آئی ایس پی آر کے مطابق مارے گئے دہشت گرد پوری طرح مسلح تھے اور ان کی جانب سے سخت مزاحمت بھی کی گئی جب کہ اس کارروائی کے دوران فائرنگ کے تبادلے میں 3 جوانوں نے جامِ شہادت بھی نوش کیا جن میں نائب صوبیدار نذر احمد چانڈیو، سپاہی فخر اور سپاہی عامر شامل ہیں۔دریں اثنا سیکیورٹی فورسز نے آپریشن کرکے علاقے کو کلیئر کردیا ہے۔

عدالت عظمیٰ کے جج کے حکم پر جرمانے کی رقم ڈیم فنڈز کے بجائے ایدھی فاؤنڈیشن کو دیدی گئی
اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)پاکستان کی عدالت عظمیٰ کے ایک بینچ نے ایک مقدمے میں التوا مانگنے پر فریق کو 50 ہزار روپے جرمانہ کیا ہے تاہم جرمانے کی رقم جمع کروانے کے بارے میں دو جج صاحبان کے درمیان اختلاف رائے سامنے آیا ہے۔جسٹس گلزار نے جرمانے کی یہ رقم دیامیر بھاشا ڈیم فنڈ میں جمع کروانے کا کہا جبکہ جسٹس قاضی فائز عیسی نے یہ رقم ایدھی فاؤنڈیشن میں جمع کروانے کے بارے میں رائے دی، جسے تسلیم کر لیا گیا۔جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں سپریم کورٹ کا تین رکنی بینچ صوبہ سندھ میں چنگچی رکشوں کی رجسٹریشن سے متعلق مقدمے کی سماعت کر رہا تھا کہ سماعت ملتوی ہونے کے بعد نورالنسا اور دیگر بنام یونائییڈ بینک کیس سماعت کے لیے مقرر ہوا۔اس مقدمے کے ایک فریق کے وکیل کی جانب سے عدالت سے یہ استدعا کی گئی کہ اس مقدمے میں کچھ دیگر دستاویزات بھی درکار ہیں اس لیے اس مقدمے کی سماعت کچھ دنوں کے لیے ملتوی کر دی جائے۔بینچ کے سربراہ کا کہنا تھا کہ مقدمے کی کارروائی کے دوران دستاویزات مکمل کرنا وکیل کی اولین ذمہ داری ہے۔ مخالف فریق نے التوا مانگنے کی مخالفت کی اور استدعا کی کہ اس مقدمے کو آج ہی سنا جائے۔جسٹس گلزار احمد نے التوا مانگنے پر فریق کے وکیل سردار اسلم کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ عدالت نے ان کے موکل پر 50 ہزار روپے جرمانہ عائد کر دیا ہے اور اْنھوں نے حکم دیا ہے کہ اس جرمانے کی رقم کو بھاشا ڈیم کی تعمیر کے فنڈز میں جمع کروایا جائے۔بینچ میں موجود جسٹس قاضی فائز عیسی نے جسٹس گلزار کے اس حکم سے اختلاف کیا اور کہا کہ ایسا نہیں ہونا چاہیے بلکہ جرمانے کی یہ رقم ایدھی فاؤنڈیشن کو دی جائے۔ اس پر بینچ کے سربراہ نے اپنا عدالتی حکم نامہ تبدیل کروایا اور کہا کہ جرمانے کی اس رقم کو ایدھی فاؤنڈیشن کو دے دیا جائے۔قانونی ماہرین کے مطابق سپریم کورٹ کی کاز لسٹ کے مطابق جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کو ایسے بینچوں کا حصہ بہت کم بنتے ہوئے دیکھا گیا ہے جس کی سربراہی چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کر رہے ہوں۔

عدالت عظمیٰ‘کڈنی اینڈ ٹرانسپلانٹ سینٹرکے معاملات چلانے کے لیے 5رکن کمیٹی قائم
اسلام آباد(صباح نیوز)عدالت عظمیٰ نے پاکستان کڈنی اینڈ ٹرانسپلانٹ سینٹرکے معاملات چلانے کے لیے جسٹس اقبال حمید الرحمن کی سربراہی میں 5 رکنی نئی مینجمنٹ اینڈ کنٹرول کمیٹی قائم کر دی ہے اور حکومت کو حکم دیا ہے کہ2 روز میں مینجمنٹ اینڈ کنٹرول کمیٹی کو ادارے کاکنٹرول اور ریکارڈ فراہم کیا جائے ۔ چیف جسٹس کی سربراہی میں3 رکنی بنچ نے ادارے سے متعلق کیس سماعت کی۔دوران سماعت چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ 30ارب روپے حکومت نے ایک ٹرسٹ کو پکڑا دیے اگر ضرورت پڑی تو اس کا آڈٹ بھی کرائیں گے۔

پیپلزپارٹی کابیگم کلثوم نوازکے جنازے میں شرکت کیلیے وفد تشکیل
لاہور(نمائندہ جسارت) پیپلزپارٹی نے سابق وزیراعظم نوازشریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نوازکے جنازے میں شرکت کے لیے وفد تشکیل دے دیا ہے۔وفد پارٹی چیئرمین بلاول زرداری نے تشکیل دیا ہے۔ وفد میں یوسف رضاگیلانی، راجا پرویز اشرف،خورشید شاہ، قمر زمان کائرہ ، نوید قمر ،چودھری منظور اور حسن مرتضی شامل ہیں۔ رپورٹ کے مطابق بلاول زرداری بعد میں اہلخانہ سے تعزیت کریں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ