لیاری سے پی ایس 108 کے امیدوار ناصرکریم بلوچ پی پی میں شامل

57

کراچی (اسٹاف رپورٹر)تحریک انصاف لیاری سے حلقہ پی ایس 108 کے امیدوار ناصر کریم بلوچ نے گزشتہ روز پی پی پی میڈیا سیل سندھ میں پاکستان پیپلز پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ناصر کریم بلوچ نے کہا کہ میں دوبارہ اپنی پارٹی میں واپس آگیا ہوں، مجھے افسوس ہے کہ لیاری سے پارٹی چیئرمین بلاول ہار گئے لیکن ہم مل کر لیاری کو دوبارہ پی پی پی کا مضبوط قلعہ بنائیں گے۔ پی ٹی آئی ایک کمرشل اور ملٹی نیشنل پارٹی ہے، اس میں ورکروں کی کوئی عزت نہیں ہے اور پارٹی کو لمیٹڈ کمپنی کی طرح چلایا جاتا ہے ،پارٹی میں سرمایہ داروں کا تسلط ہے۔ پریس کانفرنس سے پی پی پی کراچی
ڈویژن کے صدر وصوبائی وزیر سعید غنی، پی پی پی سندھ کے جنرل سیکرٹری وقار مہدی اور کراچی ڈویژن کے جنرل سیکرٹری جاوید ناگوری نے بھی خطاب کیا۔ اس موقع پر ان کے ہمراہ پی پی پی سندھ کے نائب صدر راشد ربانی، کراچی ڈویژن کے ڈپٹی سیکرٹری اطلاعات شکیل چودھری، پی پی پی میڈیا سیل سندھ کے ممبر سردار نزاکت، ڈسٹرکٹ ساؤتھ کے صدر خلیل ہوت، جنرل سیکرٹری کرم اللہ وقاصی، سیکرٹری اطلاعات نادیہ گبول بھی موجود تھیں۔ سعید غنی نے کہا کہ ناصر کریم بلوچ کی شمولیت سے لیاری میں پارٹی مضبوط ہوگی، لیاری پی پی پی کا گڑھ تھا اور رہے گا ،جن لوگوں نے کراچی کا مینڈیٹ چوری کیا ہے ان لوگوں کے لیے ناصر کریم بلوچ کی شمولیت سرپرائز ہے ،ہم لیاری سمیت پورے کراچی کی خدمت کرتے رہیں گے۔ پی پی پی سندھ کے جنرل سیکرٹری وقار مہدی نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ناصر کریم بلوچ لیاری کا ایک معتبر نام ہے، ہم نے ماضی میں بھی ساتھ کام کیا ہے اور آگے بھی مل کر کام کریں گے۔
ناصرکریم

Print Friendly, PDF & Email
حصہ