سابق وفاقی حکومت نے سی پیک میں پختونخوا کوکم حصہ دیا‘ محمود خان

36

پشاور (آن لائن) خیبر پختونخوا کے وزیراعلیٰ محمود خان نے کہا ہے کہ سابق وفاقی حکومت نے سی پیک پروجیکٹس میں خیبر پختونخوا کو بہت کم حصہ دیا‘ سی پیک میں خیبر پختونخوا کے ضروری منصوبے شامل کرانے کے لیے وفاقی حکومت اور سی پیک کمیٹی سے بات کریں گے۔ گزشتہ روز وزیراعلیٰ سیکرٹریٹ میں سی پیک سے متعلق اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں سیکرٹری پی اینڈ ڈی نے سی پیک کے مختلف پروجیکٹس پرکام کی پیش رفت اور ان پروجیکٹس کے حوالے سے مختلف مسائل پر اجلاس کے شرکا کو تفصیلی بریفنگ دی۔ بریفنگ میں بتایا گیا کہ سابق وفاقی حکومت نے خیبر پختونخوا کو سی پیک میں اس کے جائز حق سے محروم رکھا اور صوبائی پروجیکٹس کو سی پیک منصوبے میں شامل نہیں کیا گیا۔ جس پر وزیراعلیٰ محمود خان نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ وفاقی حکومت کو ایک خط لکھیں کہ وہ ہمارے ساتھ سی پیک کے مختلف پروجیکٹس کے حوالے سے تحریری معلومات کا تبادلہ یقینی بنائے۔ وزیراعلیٰ نے متبادل روٹ برائے چترال شندور لنک روڈ، رشکئی اسپیشل اکنامک زون اور گریٹر پشاور ماس ٹرانزٹ سرکلر ریل پروجیکٹ کو سی پیک میں شامل کرانے کا عندیہ بھی دیا۔
محمود خان

Print Friendly, PDF & Email
حصہ