علی انٹر پرائزسانحہ کے متاثرین کو انصاف فراہم نہیں کیا گیا، لیا قت ساہی

26

کراچی( اسٹاف رپورٹر)مزدور رہنما لیا قت علی ساہی سیکرٹری جنرل ڈیمو کریٹک ورکز فیڈریشن اور اسٹیٹ بینک سی بی اے یونین نے سانحہ بلدیہ فیکٹری کے مزدور شہداء کی چھٹی برسی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ المیہ یہ ہے کہ جس طرح علی انٹر پرائز فیکٹری بلدیہ میں مزدوروں کو ملک کے دستور کی آرٹیکل 17 اور آئی ایل او کے کنوینشن 87 اور98 پر عمل درآمد نہ کرنے کی وجہ سے تاریخ کا بد ترین سانحہ مزدوروں کو فیکٹری میں پیش آیا اس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے فیکٹری میں مزدوروں کو ملازمتوں کے تقرر نامے مالکان کی طرف سے نہ دیے جانے کی وجہ سے فیکٹری میں انجمن سازی کے حق سے طاقت کے بل بوتے پر مزدوروں کو محروم کیا گیا ہے آج چھٹی برسی ہے شہداء کی اس موقع پر محنت کش طبقہ ریاست سے مطالبہ کرتا ہے کہ ملک بھر کے پبلک اور پرائیویٹ سیکٹر میں وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی طرف سے کوئی مثبت کاوش نہیں کی گئی بلکہ ملک بھرکے اداروں میں تھرڈ پارٹی کنٹریکٹ کے ذریعے محنت کشوں کا استحصال کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے چیف جسٹس آف پاکستان سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ مزدور رہنماؤں کی طرف سے داخل کردہ محنت کشوں کے بنیادی حقوق کی نظرثانی درخواست پر سماعت کرکے ملک بھر کے محنت کشوں کو انصاف فراہم کیا جائے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ