فضل الرحمن کیخلاف مقدمے کی درخواست پر وکلا دلائل کیلیے طلب

100

لاہور(صباح نیوز)سیشن کورٹ نے جے یو آئی (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن کیخلاف اندراج مقدمہ کی درخواست پر فریقین کے وکلا کو بحث کے لیے طلب کر لیا۔رپورٹ کے مطابق ایڈیشنل سیشن جج اظہر اقبال رانجھا نے شہری تنزیلہ عمران کی درخواست پر اس کیس کی سماعت کی، عدالت کے روبرو تھانہ ماڈل ٹاؤن کے ایس ایچ او نے رپورٹ جمع کرا دی اور کہا کہ ایسا واقعہ تھانے کی حدود میں پیش نہیں آیا کہ اس پر پولیس کارروائی کرے۔ عدالت میں درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ مولانا فضل الرحمن نے 8اگست کو الیکشن کمیشن اسلام آباد کے دفتر کے باہر اشتعال انگیز تقریر کی،عوام کو پاک فوج کے خلاف بھڑکایا۔ مولانا فضل الرحمن نے تقریر میں کہا کہ ہم 14اگست نہیں منائیں گے جس سے عوام کے جذبات مجروح ہوئے ،تقریر بغاوت کے زمرے میں آتی ہے۔ عدالت نے فریقین کے وکلا کو بحث کے لیے طلب کرلیا اور کیس کی سماعت 11 ستمبر تک ملتوی کردی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ