پاکستان یومیہ 5 ارب سود ادا کرتا ہے،وزیراعظم

268

وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ پاکستان 5 ارب روپے یومیہ سود ادا کرتا ہے جب کہ اس کی شہری املاک کے 90 فیصدحصے کی قیمت 300 ارب سے زائد ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بیان میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ وفاق، خیبرپختونخوا اور پنجاب میں سرکاری زمین اور رہائش گاہوں کے 90 فیصد اعداد و شمار ملے ہیں، سرکاری زمین کی مالیت سے متعلق اعداد و شمار ہوش اڑا دینے کی حد تک حیرت ناک ہیں۔ان ہوشربا اعداد و شمار کے مطابق 34 ہزار 459 کنال اراضی دیہی اور 17 ہزار 35 کنال اراضی شہری علاقے میں واقع ہے، محض شہری اراضی اور اس پر قائم عمارات کی قیمت 300 ارب روپے سے زائد ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان کو قرضوں پر سود ادا کرنیکے لیے عالمی اداروں سےامداد لینا پڑتی ہے، پاکستان جیسا ملک کیسے 300 ارب روپے کیسےایک جگہ منجمد کرسکتا ہے؟۔وزیراعظم کا کہنا ہے کہ ایک ایسا ملک جو سود کی ادائیگی کے لئے بھی اپنی آئندہ نسلوں پر بوجھ  ڈالتے ہوئے قرض کا سہارا لیتا ہے، وہ سرکاری اراضی عمارتوں کی شکل میں غیراستعمال شدہ سرمائے کے بڑے ڈھیر پر بیٹھا ہے، پاکستان 5 ارب روپے یومیہ سود ادا کرتا ہے،جب کہ اس کی شہری املاک کے جبکہ اس کی شہری املاک کے 90 فیصد حصے کی قیمت 300 ارب سے زائد ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ