سی پیک منصوبے کو رول بیک کرنے کی کوشش کی تو حکومت کا ہاتھ پکڑیں گے،احسن اقبال

123

پاکستان مسلم لیگ (ن)کے رہنما اور سابق وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال نے کہا ہے کہ پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کو رول بیک کرنے کی کوشش کی گئی تو صرف اس کی مخالف نہیں بلکہ حکومت کا ہاتھ پکڑیں گے۔

ماہرِ معاشیات اور وزیراعظم عمران خان کے مشیر برائے صنعت و تجارت عبدالرزاق دا ئو د کے سی پیک پر انٹرویو پر اپنے رد عمل میں احسن اقبال نے کہا کہ سی پیک پاکستان کے شفاف منصوبوں میں سے ایک ہے، جس میں پاکستان اور چین کے اعلی ترین عہدیداوں نے سنجیدگی سے کام کیا، اس حوالے سے قوم میں بدگمانی پھیلانا قوم کے ساتھ دشمنی کے مترادف ہے۔

احسن اقبال نے کہا کہ چین نے اس وقت پاکستان میں سرمایہ لگایا جب کوئی بھی ملک پاکستان میں 10 روپے کی سرمایہ کاری کرنا نہیں چاہتا تھا، اس منصوبے نے پاکستانی معیشت کو سنبھالا دیا۔انہوں نے کہا کہ سی پیک پر پاک چین دوستی کے جذبے کے تحت خلوص سے کام کیا گیا اور اس منصوبے سے ہزاروں لاکھوں لوگوں کے لیے روزگار کے مواقع فراہم ہوں گے۔

احسن اقبال نے مطالبہ کیا کہ اقتصادی راہداری منصوبے سے متعلق الزامات لگانا درست نہیں، سی پیک کی تحقیقات کے لیے آزاد کمیشن بنایا جائے۔ حکومت سی پیک کے معاملے پر عوام کو اعتماد میں لے اور منصوبے کو روکنے سے متعلق بیانات سے قوم کو گمراہ کرنے سے باز رہا جائے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ