حکومت نے گیس کی قیمتوں میں اضافہ موخر کردیا

125

اقتصادی رابطہ کمیٹی نے گیس کی قیمتوں کے معاملے پراسٹیک ہولڈرز سے مزیدتجاویزطلب کرتے ہوئے گیس کی قیمتوں میں اضافے کا معاملہ وزیراعظم کے سپرد کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کی زیر صدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی کا اجلاس ہوا،جس میں ای سی سی کے ایجنڈے پر غور کیا گیا، اقتصادی رابطہ کمیٹی نے گیس کی قیمتوںمیں اضافہ موخر کرتے ہوئےمعاملے پر اسٹیک ہولڈرز سے مزید تجاویز طلب کرلیں، گیس کی قیمتوں میں اضافے سے پہلے مزید غور کیا جائے گا۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی نے قیمتوں میں اضافے کے لیے گائیڈ لائنز طے کرلی ہیں تاہم گیس کی قیمتوں میں اضافے کا حتمی فیصلہ وزیراعظم عمران خان کریں گے۔ اجلاس میں کھاد فیکڑیوں کو پچاس فیصد مقامی گیس اور پچاس فیصد ایل این جی مہیا کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، ایل این جی کا پچاس فیصد بل کھاد کمپنیاں ادا کریں گی جب کہ 50 فیصد حکومت ادا کرے گی۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ تمام کھاد فیکڑیاں پوری صلاحیت کے مطابق کھاد پیدا کریں گی جب کہ یوریا کھاد پوری کرنے کے لیے کھاد درآمد کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ گیس کمپنیوں نے قیمتوں میں 100 فیصد اضافے کا مطالبہ کر رکھا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ