ٹریڈیونینزپر پابندی کے ریمارکس ناقابل قبول ہیں ، نظام الدین شاہ

35

کراچی (اسٹاف رپورٹر) محنت کشوں کو اپنے اتحاد کے ذریعے سرمایہ دارانہ نظام کا مقابلہ کرنا ہو گا ۔چیف جسٹس کے ٹریڈیونینز پر پابندی کے ریمارکس محنت کشوں کی توہین اور ناقابل قبول ہیں ۔نئے حکمراں بھی آئی ایم ایف کے شکنجہ میں گرفتار ہوگئے ہیں ۔نیشنل لیبر فیڈریشن محنت کشوں کو ان کے حقوق کیلیے متحد اور منظم کرے گی۔ یہ بات نیشنل لیبر فیڈریشن سندھ کے صدر سید نظام الدین شاہ نے این ایل ایف کراچی کی مجلس عاملہ کے اجلاس سے اپنے خطاب میں کہی ۔اس موقع پر این ایل ایف کراچی کے صدر عبدالسلام ،جنرل سیکرٹری محمد قاسم جمال ،سینئر نائب صدر امان بادشاہ نے بھی خطاب کیا ۔سید نظام الدین شاہ نے کہا کہ آئی ایل او قوانین کے تحت پاکستان میں ٹریڈ یونین تنظیمیں محنت کشوں کی فلاح و بہبود کیلیے جدوجہد کررہی ہیں ۔ٹریڈ یونین تنظیموں کا پاکستان میں شاندار ماضی ہے ۔مارشل لا اور غیر جمہوری قوتوں و آمروں کے خلاف ٹریڈ یونین تنظیموں نے آگے بڑھ کر جدجہد کی ہے ۔چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کی بحالی تحریک میں سول سوسائٹی کے شانہ بشانہ ٹریڈ یونین تنظیموں نے بھی تاریخی جدجہد کی ہے ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کا مزدور پہلے سے بھی زیادہ باشعور اور بیدار ہے ۔قومی اداروں کی نج کاری کیلیے جو کھیل کھیلا جا رہا ہے ہم اس سے باخوبی واقف ہیں ۔پاکستان کا محنت کش مزدور دشمن اقدام کسی قیمت پر برداشت نہیں کرینگے اور مزدور دشمن اقدامات کے خلاف پوری قوت کے ساتھ مقابلہ کیا جائے گا ۔اور اس سلسے میں کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کیا جائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.