حریت قیادت کی15اگست کووادی میںیوم سیاہ اور مکمل ہڑتال کرنیکی اپیل

49

سرینگر (اے پی پی) مقبوضہ کشمیر میں سید علی گیلانی ، میرواعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک پرمشتمل مشترکہ مزاحمتی قیادت نے 15اگست یعنی بھارت کے یوم آزادی کو یوم سیاہ کے طور پرمنانے اور اس موقع پر مکمل اور ہمہ گیر احتجاجی ہڑتال کرنے کی کال دی ہے۔ کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق آزادی پسند رہنماؤں نے سرینگر میں جاری ایک مشترکہ بیان میں کہا کہ اپنی آزادی کا جشن منانے والے
بھارت نے فوجی طاقت کے بل پر مظلوم کشمیری قوم سے آزادی کا حق چھین لیا ہے انہوں نے کہا کہ کشمیری قوم کو حق آزادی سے محروم کرکے اس پر 7 لاکھ سے زایدمسلح افواج کومسلط کردیاگیا ہے ۔حریت رہنماؤں نے کہا بھارتی حکمران اس تاریخی حقیقت کو بھول گئے ہیں کہ بھارت کے پہلے وزیراعظم پنڈت جواہر لعل نہرو نے سرینگر کے تاریخی لالچوک اور پھر بھارت کی پارلیمنٹ میں یہ اعلان کیا تھا کہ کشمیری قوم کو حق خودارادیت فراہم کرکے ان کے اپنے سیاسی مستقبل کے تعین کا موقع دیا جائیگا۔ 15اگست کی آمد پر ایک طرف پوری ریاست میں خوف و دہشت کا ماحول قائم کیا گیا ہے اورتلاشیوں، گرفتاریوں اور جگہ جگہ ناکے لگا کر لوگوں کو ڈرانے اور دھمکانے کا سلسلہ تیز کردیا گیا ہے اور دوسری طرف سرکاری اور نجی تعلیمی اداروں میں زیر تعلیم طلباء کو ڈپٹی کمشنروں اور میونسپلٹی دفاتر کے ذریعے بھارت کے یوم آزادی کی تقریبات میں شرکت پر مجبور کیا جارہا ہے جبکہ سرکاری ملازموں پر دباؤ ڈالا جارہا ہے کہ وہ 15اگست کی تقریبات میں شرکت کو یقینی بنائیں

Print Friendly, PDF & Email
حصہ