بنکاک میں 5ویں ایشیائی کھیلوں میں پہلی مرتبہ 18ممالک کی شرکت

25

سید پرویز قیصر
18ویں ایشیائی کھیل انڈونیشیا کے دارالحکومت جکارتہ میں18 اگست سے2 ستمبر تک منعقد ہونگے جس میں45 ملکوں کے10 ہزار کھلاڑی 40 کھیلوں کے465 مقابلوں میں حصہ لیں گے۔ یہ دوسرا موقع ہے جب جکارتہ میں ایشیائی کھیل منعقد ہورہے ہیں اس سے پہلے 1962 میں چوتھے ایشیا ئی کھیل ہوئے تھے۔ پہلے ایشیائی کھیل بھارت کے دارلحکومت نئی دہلی میں1951میں ہوئے ۔ دوسرے ایشیائی کھیل فلپائین کے دارلحکومت منیلامیں1954 میں منعقد ہوئے۔ تیسرے ایشیائی کھیل جاپان کے ٹوکیو شہر میں1958 میں ہوئے۔انڈونیشیا کے دارلحکومت جکارتہ میں1962 چوتھے ایشیائی کھیل ہوئے تھے۔
5ویں ایشیائی کھیل جاپان کے نام رہا
تھائی لینڈ کے دارلحکومت بنکاک میں 1966 میں9 سے20 دسمبر 5ویں ایشیائی کھیل منعقد ہوئے جس میں 18ملکوں کے 1945کھلاڑیوں نے 14 کھیلوں کے142 مقابلوں میں شرکت کی ۔جن 18ملکوں کے کھلاڑیوں نے ان کھیلوں میں شرکت کی تھی اس میں سے 16ملکوں کے کھلاڑی کوئی نہ کوئی تمغہ لیکر وطن واپس گئے تھے۔ جاپان نے مجموعی طور پر164تمغوں کے ساتھ پہلا مقام حاصل کیا تھا جس میں78طلائی،53نقرئی اور33کانسی کے تمغے شامل تھے۔ با قی تمام ملکوں کے کھلاڑی ملکر 62طلائی تمغے جیت پائے تھے۔ جنوبی کوریانے 51تمغوں کے ساتھ دوسرا مقام حاصل کیا تھا جس میں12 طلائی،18نقرئی اور21کانسی کے تمغے شامل تھے۔ میزبان تھائی لینڈ نے 37 تمغوں کے ساتھ تیسرے مقام حاصل کیا جو اسکی مشترکہ طور پر سب سے اچھی کارکردگی تھی۔ اس نے3 مرتبہ اس سے زیادہ تمٖغے حاصل کئے مگر اس کی پوزیشن تیسری سے اچھی نہیں رہی۔ اس نے12طلائی،14نقرئی اور11 کانسی کے تمغے جیتے تھے۔ ملیشیا نے کل 18 تمغے حاصل کئے اور چوتھا مقام حاصل کیا۔ اس نے7 طلائی،5 نقرئی اور6 کانسی کے تمغے حاصل کئے۔ بھارت نے کل 21تمغوں کے ساتھ 5واں مقام حاصل کیاْ ْ ۔ اس نے7 طلائی،3 نقرئی اور11 کانسی کے تمغے شامل تھے۔ ایران نے6 طلائی،8نقرئی اور17ؓ کانسی کے تمغوں کے ساتھ چھٹا مقام حاصل کیا۔7واں مقام انڈونیشیا نے کل 22 تمغوں کے ساتھ حاصل کیا جس میں5طلائی،5 نقرئی اور12 کانسی کے تمغے شامل تھے۔ تائیوان نے 5 طلائی،۴ نقرئی اور۱10 کانسی کے تمغوں کے ساتھ 8واں مقام حاصل کیا۔ اسرائیل (ناپسندیدہ ملک) کو 9واں مقام 11 تمغوں کے ساتھ حاصل ہوا جس میں3 طلائی،5 نقرئی اور3 کانسی کے تمغے شامل تھے۔ فلپائین نے کل42 تمغوں کے ساتھ10واں مقام حاصل کیا ۔ اس میں2 طلائی،15نقرئی اور25 کانسی کے تمغے شامل تھے۔ پاکستان نے2طلائی،4 نقرئی اور2 کانسی کے تمغوں کے ساتھ 11واں مقام حاصل کیاْ ۔ میانمار نے کل5 تمغے جیتے اور 12واں مقام حاصل کیا۔ اس نے ایک طلائی، اور4کانسی کے تمغے شامل تھے۔
سنگا پور(5 نقرئی،7 کانسی)،جنوبی ویٹ نام(ایک نقرئی، ایک کانسی)، سری لنکا(6 کانسی)اور ہانگ کانگ(ایک کانسی) بھی تمغے جیتنے میں کامیاب رہے۔کل460 تمغے دےئے گئے جس میں140 طلائی اور 140 نقرئی اور170 کانسی کے تمغے شامل تھے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.