اسرائیلی دہشت گردی دکھانے کے جرم میں 4 فلسطینی صحافی گرفتار

211

غزہ: اسرائیلی فوج نے آزادی اظہار رائے کے بنیادی انسانی حقوق کی پامالی کرتے ہوئے فلسطینی چینل کے دفتر پر چھاپا مار کر 4 صحافیوں کو حراست میں لے لیا ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق اسرائیلی فوج نے گزشتہ شب مقبوضہ مغربی کنارے میں قائم ایک نیوز چینل کے مرکزی دفتر پر چھاپا مار کر 4 فلسطینی صحافیوں کو گرفتار کرلیا ہے۔ گرفتار صحافیوں پر دہشت گردی کی معاونت اور انتہا پسندانہ مواد نشر کرنے کا الزام تھا۔

دوسری جانب حماس کے ترجمان کا کہنا ہے کہ گزشتہ شب جس ٹی وی اسٹیشن پر چھاپا مارا گیا ہے وہ حماس کا ترجمان چینل ’القدس‘ ہے. چینل سے ڈائریکٹر کے ساتھ دیگر 3 صحافیوں کو گرفتار کیا گیا۔ القدس فلسطینوں پر اسرائیلی مظالم سے دنیا کو آگاہ کرنے والا واحد چینل ہے۔ اسرائیل آزادی اظہار رائے کے بنیادی حقوق بھی سلب کرنا چاہتا تھا۔

واضح رہے کہ اسرائیلی فوج نے چنیل پر چھاپا اسرائیلی وزیر دفاع آوِگ دور لیبر مَن کے اس بیان کے بعد مارا جس میں انہوں نے اس چینل کو دہشت گرد تنظیم کا وفادار قرار دے کر سخت کارروائی کا عندیہ دیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ