بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں بھوک سے 3 بچیاں جاں بحق

75
نئی دہلی: بھوک کے مارے جاں بحق ہونے والی بچیوں کی باپ کے ساتھ فائل فوٹو
نئی دہلی: بھوک کے مارے جاں بحق ہونے والی بچیوں کی باپ کے ساتھ فائل فوٹو

نئی دہلی (انٹرنیشنل ڈیسک) بھارتی دارالحکومت میں بھوک کے باعث 3بچیاں جاں بحق ہوگئیں۔ مقامی ذرائع کے مطابق 2سے 8سال کی درمیانی عمر کی 3 بہنوں کی موت سے ملک بھر میں غربت پر ایک نئی بحث چھڑ گئی ہے۔ پوسٹ مارٹم کی رپورٹ کے مطابق بچیاں فاقہ کشی اور غذائی قلت سے پیدا ہونے والے طبی مسائل کی وجہ سے ہلاک ہوئیں۔ نئی دہلی پولیس نے بتایا کہ مختل اسپتالوں کے ڈاکٹرز نے لاشوں کا طبی معائنہ کیا، جس سے ثابت ہوا کہ تینوں بہنوں کے ہلاک ہونے کی وجہ خوراک کی کمی اور فاقہ تھی۔ رپورٹ کے مطابق ان کے معدے میں خوراک کا کوئی نشان نہیں ملا، جس سے ثابت ہوتا ہے کہ انہوں نے 8

دن سے کچھ نہیں کھایا تھا۔ نئی دہلی کے نائب وزیر اعلیٰمنیش سیسودیا نے بتایا کہ صوبائی حکومت نے مجسٹریٹ کی نگرانی میں واقعے کی تحقیقات کا حکم دے دیا ہے۔ بچیوں کا والد رکشا چلاتا تھا، تاہم کچھ دن قبل ان کا رکشاچوری ہو گیا تھا، جس کے بعد وہ بے روز گار ہو گیا۔ منیش سیسودیا نے بتایا کہباپ کی غیر موجودگی میں ہی یہ واقعہ رونما ہوا،جب کہ بچیوں کی ماں ذہنی مسائل کا شکار ہے۔ کرایہ نہ ہونے کی وجہ سے اس خاندان کو مکان سے زبردستی نکال دیا گیا تھا، جس کے بعد وہ شہر کی منڈاوالا نامی علاقے میں قائم ایک کچی بستی میں منتقل ہونے پر مجبور ہو گئے۔پولیس افسر پنکج کمار سنگھ نے بتایا کہ ان کے جسموں پر تشدد کا کوئی نشان موجود نہیں تھا۔ واضح رہے کہ بچوں میں غذائی قلت کی شرح بھارت میں بہت زیادہ ہے۔
بھارت/بھوک

Print Friendly, PDF & Email
حصہ