کینیڈا میں فائرنگ ،2افراد ہلاک ,12زخمی

95
ٹورنٹو: پولیس نے فائرنگ کے بعد جائے وقوع کو سیل کردیا ہے‘ زخمیوں کو طبی امداد فراہم کی جارہی ہے 
ٹورنٹو: پولیس نے فائرنگ کے بعد جائے وقوع کو سیل کردیا ہے‘ زخمیوں کو طبی امداد فراہم کی جارہی ہے 

ٹورنٹو (انٹرنیشنل ڈیسک) کینیڈا کے معروف شہر ٹورنٹو میں اندھا دھند فائرنگ کے ایک واقعے میں 2 افراد ہلاک اور 12زخمی ہوگئے۔ خبررساں اداروں کے مطابق یہ واقعہ اتوار اور پیر کی درمیانی شب پیش آیا۔ واقعے میں فوری طور پر ایک شہری ہلاک اور 13زخمی ہوئے تھے، تاہم پولیس سربراہ مارک سینڈرز نے بتایا کہ واقعے میں زخمی ہونے والی ایک لڑکی بھی انتقال کر گئی، جب کہ 12 افراد زخمی ہیں۔ مقامی ذرائع ابلاغ پر شیئر کیے جانے والے ایک وڈیو کلپ میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ایک سفید فام شخص جس نے گہرے رنگ کا لباس اور ٹوپی پہن رکھی ہے اور اس کے کاندھے پر ایک تھیلا ہے، فٹ پاتھ پر رکتا ہے اور بندوق نکال
کر گولیاں چلا دیتا ہے۔ اس واقعے کے بعد پولیس نے موقع پر پہنچ کر علاقہ خالی کرا لیا۔ کچھ زخمیوں کو جائے حادثہ پر ہی طبی امداد دی گئی، جب کہ دیگر کو اسپتال منتقل کیا گیا، جہاں ان کا علاج جاری ہے۔ اس پُرتشدد کارروائی کے محرکات ابھی تک معلوم نہیں ہو سکے۔ پولیس نے بتایا ہے کہ 29 سالہ حملہ آور کو بھی ہلاک کر دیا گیا ہے اور تمام پہلوؤں کو سامنے رکھتے ہوئے تفتیش کی جا رہی ہے۔ یہ واقعہ شہر کے اس مشرقی علاقے میں پیش آیا ہے، جہاں کئی مقبول ریستوان بھی واقع ہیں۔ مقامی میڈیا کا کہنا ہے کہ مقامی وقت کے مطابق شوٹنگ کا یہ واقعہ رات 2 بجے رونما ہوا۔ عینی شاہدین نے بتایا کہ مجموعی طور پر 25 فائر کیے گئے۔ یاد رہے کہ رواں سال کے دوران ٹورنٹو میں رونما ہونے والے پُرتشدد واقعات میں واضح اضافہ ہوا ہے۔ پولیس کے اعداد و شمار کے مطابق اس شہر میں گزشتہ برس کے مقابلے میں رواں برس ایسے واقعات میں دو گنا اضافہ دیکھنے میں آیا ۔ 2017ء کے مقابلے میں 2018ء میں فائرنگ کے واقعات میں 13 فیصد اضافہ نوٹ کیا گیا، جب کہ پُرتشدد واقعات 26 فیصد سے بڑھ کر 53 فیصد ریکارڈ کیے گئے۔ جولائی کی ابتدا سے ٹورنٹو میں 200 پولیس اہل کار تعینات ہیں۔ حکام کے مطابق اس شہر میں پُرتشدد واقعات کی وجہ منظم گروہوں کی کارروائیاں ہیں۔
کینیڈا ؍ فائرنگ

Print Friendly, PDF & Email
حصہ