سات دن میں کے ایس ای100انڈیکس 900پوائنٹس بڑھ گیا

113

کراچی:عام انتخابات کی تاریخ قریب آتے ہی سیاسی درجہ حرارت میں اضافے کے باوجودسرمایہ کاروں نے پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں کاروبار پر توجہ کو مرکوز رکھی جس کی وجہ سے پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں گذشتہ ہفتے تیزی کا رجحان رہا

کے ایس ای100انڈیکس 900پوائنٹس بڑھ گیا جس سے انڈیکس41ہزار پوائنٹس کی نفسیاتی حد پر بحال ہو گیا جبکہ مارکیٹ کے سرمائے میں159ار ب روپے کا اضافہ بھی ریکارڈ کیا گیا جس سے سرمائے کا مجموعی حجم 83کھرب روپے سے بڑھ کر84کھرب روپے کی سطح پر جا پہنچا ۔

کاروبار کے لحاظ سے بینک آف پنجاب ،فوجی سیمنٹ ،بینک اسلامی پاکستان ،اینگرو پولیمر ،کے الیکٹرک لمیٹڈ ،اینگرو پولی ،فیصل بینک ،حبیب بینک ،صدیق سنز ٹن ،ڈی جی کے سیمنٹ ،ٹی آر جی پاک لمیٹڈ ،فوجی فوڈز لمیٹڈ ،یونٹی فوڈز لمیٹڈ ،پاک الیکٹرون ،ڈولمن سٹی ،نیمائر ریسائنس ،پاک ریفائنری ،ورلڈ کال ٹیلی کام ،اور بائیکو پیٹرولیم سر فہرست رہے ۔پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں 3روزہ تیزی سے انڈیکس میں2129.82پوائنٹس کا اضافہ ہوا تاہم حیرت انگیز طور پر پہلے دن اور کاروبار کے آخری دن مندی کی وجہ سے انڈیکس1179.07پوائنٹس لوز کر گیا لیکن اس کے باوجود مارکیٹ میں تیزی کے اثرات زیادہ غالب رہے

،مقامی انسٹی ٹیوشنز اور بروکریج ہاؤسز کی جانب سے منافع بخش حصص کیساتھ کم قیمت حصص کی خریداری میں عروج پر رہی جس کی وجہ سے مارکیٹ ٹریڈنگ کے دوران بلندوں کی جانب گامزن رہی ۔تجزیہ کاروں کے مطابق معاشی صورتحال بہتر نہ ہونے اور روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر میں ریکارڈ اضافے کے باوجود تیزی کا رجحان مارکیٹ کے مستحکم ہونے کی ضمانت نہیں کیونکہ پاکستان اسٹاک ایکس چینج کے سابق چیئرمین و ڈائریکٹر حسین لوائی کی گرفتاری سے سرمایہ کاری تذبذ ب کا شکار ہیں اور مالیاتی ادارے مارکیٹ کو سہارا دینے کی غرض سے سرمایہ کاری کر رہے ہیں۔

ان تمام صورتحال کے باوجود مارکیٹ کا مثبت ہونا حیران کن امر ہے قومی امکان ہے کہ سرمایہ کار تیزی کے اسی ٹریگر کو دیکھتے ہوئے آئندہ دنوں میں بھی سرمایہ کاری میں دلچسپی لیں گے ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں گذشتہ ہفتے ٹریڈنگ کے دوران کے ایس ای100انڈیکس میں950.75پوائنٹس کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے انڈیکس 40271پوائنٹس سے بڑھ کر41221.75پوائنٹس ہو گیا

اسی طرح532.91پوائنٹس کے اضافے سے کے ایس ای30انڈیکس 19865.44پوائنٹس سے بڑھ کر 20398.35پوائنٹس ہو گیا جبکہ کے ایس ای آل شیئر زانڈیکس 29364.06پوائنٹس سے بڑھ کر29947.01پوائنٹس پر جا پہنچا ۔کاروباری تیزی کے سبب گذشتہ ایک ہفتے کے دوران مارکیٹ کے سرمائے میں 1کھرب59ارب11کروڑ80لاکھ 74ہزار820روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس کے نتیجے میں سرمائے کا مجموعی حجم 83کھرب17ارب 9کروڑ23لاکھ 59ہزار161روپے سے بڑھ کر84کھرب 76ارب21کروڑ4لاکھ33ہزار981روپے ہو گیا ۔گذشتہ ہفتے مارکیٹ میں ٹریڈنگ کے دوران انڈیکس 41898.76پوائنٹس کی بلند ترین سطح کو چھو گیا تھا

تاہم مندی کے رجحان کی وجہ سے ایک موقع پر انڈیکس 39332.82پوائنٹس کی کم ترین سطح تک بھی گر گیا تھا ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں گذشتہ ہفتے زیادہ سے زیادہ13ار ب روپے مالیت کے 33کروڑ70لاکھ 87ہزار حصص کے سودے ہوئے جبکہ کم سے کم6ارب روپے مالیت کے14کروڑ74لاکھ80ہزار حصص کے سودے ہوئے تھے ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں گذشتہ ہفتے کے دوران مجموعی طور پر 1792کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سے977کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ،706میں کمی اور109کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ
mm
قاضی جاوید سینئر کامرس ریپورٹر اور کامرس تجزیہ، تفتیشی، اور تجارتی و صنعتی،معاشی تبصرہ نگار کی حیثیت سے کام کرنے کا وسیع تجربہ رکھتے ہیں ۔جسارت کے علاوہ نوائے وقت میں ایوان وقت ،اور ایوان کامرس بھی کرتے رہے ہیں ۔ تکبیر،چینل5اور جرءات کراچی میں بھی کامرس رپورٹر اور ریڈیو پاکستان کراچی سے بھی تجارتی،صنعتی اور معاشی تجزیہ کر تے ہیں qazijavaid61@gmail.com