این اے 130 ، علماءبورڈ کا لیاقت بلوچ کی حمایت کا اعلان

107

متحدہ مجلس عمل اور جماعت اسلامی پاکستا ن کے سیکرٹری جنرل اور این اے 130 سے امیدوار قومی اسمبلی لیاقت بلوچ نے اپنے حلقہ انتخاب میں ماڈل ٹاﺅن ، علامہ اقبال ٹاﺅن ، مسلم ٹاﺅن ، وحدت کالونی ، پوسٹل کالونی ، ماڈل ٹاﺅن پارک میں کارنر میٹنگز اور جامع مسجد شادمان ، ماڈل ٹاﺅن ، ایف سی بلاک جامع مسجد ، جامع مسجد قبا میں نمازیوں سے ملاقات اور خطاب کیا۔ اس موقع پر این اے 130 سے کل مسالک علماءبورڈ نے لیاقت بلوچ کی حمایت کا اعلان بھی کیا ۔

لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ دہشتگردی کے ہولناک واقعات اور میاں نوازشریف کی احتساب عدالت سے سزا کے بعد گرفتاری کی صورتحال کے باوجود تمام سٹیک ہولڈرز کا عام انتخابات کا 25 جولائی کو ہی انعقاد پر اتفاق حوصلہ افزا ہے ۔ مضبوط اور مستحکم جمہوریت ہی دہشتگردی کو شکست دے گی اور ملک ترقی و استحکام کی منزل حاصل کرے گا ۔ انہوں نے کہاکہ ملک اندرونی و بیرونی خطرات میں گھرا ہواہے ۔ شفاف اور غیر جانبدار انہ الیکشن نہ ہوئے تو نگران حکومت ، الیکشن کمیشن اور ریاستی اداروں کی ساکھ کو نقصان تو پہنچے گا لیکن ملک بے یقینی ، احتجاج اور شدید ردعمل کی زد میں آ جائے گا ۔

لیاقت بلوچ نے کہاکہ آئینی ، انتخابی اور پارلیمانی عمل ہی نظام مصطفےٰ کے نفاذ کا پائیدار راستہ ہے ۔ متحدہ مجلس عمل عوامی فلاح و بہبود ، معاشی ترقی ، بہتر گورننس ، تعلیم ، صحت ، پانی ، سستی بجلی فراہمی اور ماحولیاتی تحفظ کے ذریعے ملکی تعمیر و ترقی کا لائحہ عمل بناچکی ہے ۔ این اے 130 میں عوام مسلم لیگ اور تحریک انصاف سے بے زارہوچکے ہیں ۔ ووٹرز کرپشن سے نجات چاہتے ہیں اور عقیدہ ختم نبوت کے قانون پر ڈاکہ زنی کرنے والوں سے ووٹ کی طاقت سے حساب لیں گے ۔ روزبروز این اے 130 میں کتاب کا نشان مقبولیت پارہاہے ۔کارنر میٹنگز اور جلسوں سے احمد سلمان بلوچ ، محمد شفیق گوجر ، حافظ محمود ، عبدالحمید اعوان ، فیض الباری ، عبدالودودقاضی ، عامر نثار خان اور قدیر شکیل نے بھی خطاب کیا ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ