پاکستان نے آسٹریلیا کو ہراکر سہ ملکی ٹی ٹوئنٹی سیریز اپنے نام کرلی

155
ہرارے: سہ ملکی ٹی ٹوئنٹی سیریز جیتنے کے بعد پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد ٹرافی وصول کررہے ہیں ‘قومی کھلاڑیوں کا ٹرافی کے ساتھ لیاگیا گروپ فوٹو۔قومی قائد سہ ملکی سیریز کی ٹرافی اٹھائے صحافیوں کو پوز دے رہے ہیں 
ہرارے: سہ ملکی ٹی ٹوئنٹی سیریز جیتنے کے بعد پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد ٹرافی وصول کررہے ہیں ‘قومی کھلاڑیوں کا ٹرافی کے ساتھ لیاگیا گروپ فوٹو۔قومی قائد سہ ملکی سیریز کی ٹرافی اٹھائے صحافیوں کو پوز دے رہے ہیں 

ہرارے (جسارت نیوز) فخر زمان کی دھواں دار اننگز کی بدولت پاکستان نے آسٹریلیا کو 6 وکٹوں سے شکست دے کر سہ ملکی ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل کرکٹ سیریز جیت لی، آسٹریلیا نے پہلے کھیلتے ہوئے مقررہ اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 183 رنز کا مجموعہ ترتیب دیا، ڈی آرسی شارٹ نے 76 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی، جواب میں پاکستانی ٹیم نے مطلوبہ ہدف 19.2 اوورز میں 4 وکٹوں کے نقصان پر حاصل کیا، 2 کے اسکور پر گرین شرٹس کی 2 وکٹیں گر گئیں، فخر زمان اور سرفراز نے مل کر ٹیم کا اسکور 47 تک پہنچایا، کپتان کے آؤٹ ہونے کے بعد شعیب ملک نے فخر کا ساتھ دیا، دونوں بلے بازوں نے ڈٹ کر کینگروز بولرز کا مقابلہ کیا اور چوتھی وکٹ کی شراکت میں 107 قیمتی رنز جوڑ کر اسے فتح کے قریب پہنچایا، فخر زمان نے جارحانہ بلے بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے حریف بولرز کی خوب دھنائی کی اور 91 رنز بنا کر ٹاپ اسکورر رہے، فخر کے آؤٹ ہونے کے بعد شعیب ملک اور آصف علی نے شاندار بیٹنگ کر کے آسٹریلیا کی جیت کی امیدوں پر پانی پھیر دیا، شعیب 43 اور آصف 17 رنز بنا کر ناقابل شکست رہے، ڈی آرسی شارٹ کی 76 رنز کی اننگز رائیگاں گئی، فخر زمان میچ اور سیریز کے بہترین کھلاڑی قرار پائے۔ اتوار کو ہرارے اسپورٹس کلب میں کھیلے گئے سہ ملکی سیریز کے فائنل میں آسٹریلوی قائد ایرون فنچ نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا جو ان کیلئے درست ثابت نہ ہو سکا، آسٹریلیا نے پہلے کھیلتے ہوئے مقررہ اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 183 رنز بنائے، ڈی آرسی شارٹ نے 53 گیندوں پر 4 چھکوں اور 7 چوکوں کی مدد سے 76 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی، کپتان فنچ 47 رنز بنا کر دوسرے نمایاں کھلاڑی رہے، ٹریوس ہیڈ 19، گلین میکسویل 5،ا سٹوئنس 12، ایلکس کیری 2، آشٹن ایگر 7 اور اینڈریو ٹائی بغیر کوئی رن بنائے آؤٹ ہوئے، محمد عامر نے 3، شاداب خان نے 2، فہیم اشرف، حسن علی اور شاہین شاہ آفریدی نے ایک، ایک وکٹ لی۔ جواب میں پاکستانی ٹیم نے مطلوبہ ہدف آخری اوور کی دوسری گیند پر 4 وکٹوں کے نقصان پر پورا کیا، گرین شرٹس کی اننگز کا آغاز انتہائی مایوس کن تھا اور پہلے ہی اوور میں اسے صاحبزادہ فرحان اور طلعت حسین کا نقصان اٹھانا پڑا، دونوں بغیر کوئی رن بنائے آؤٹ ہوئے، اس موقع پر کپتان سرفراز احمد اور فخر زمان نے جارحانہ بیٹنگ کرتے ہوئے ٹیم کا اسکور 47 تک پہنچا کر اسے دباؤ سے نکالا، سرفراز 28 رنز بنانے کے بعد رن آؤٹ ہو گئے، اس کے بعد شعیب ملک نے فخر زمان کا ساتھ دیا، دونوں بلے بازوں نے ڈٹ کر کینگروز بولرز کا مقابلہ کیا اور چوتھی وکٹ کی شراکت میں 107 قیمتی رنز جوڑ کر ٹیم کو فتح کے قریب پہنچایا، 154 کے اسکور پر پاکستان کی چوتھی وکٹ گری جب فخر زمان جو کہ اچھی بیٹنگ کر رہے تھے 91 کے انفرادی اسکور پر رچرڈسن کی گیند پر کیچ آؤٹ ہو گئے، فخر کے آؤٹ ہونے کے بعد شعیب ملک اور آصف علی نے 33 ناقابل شکست رنز جوڑ کر ٹیم کو فتح دلائی، شعیب 43 اور آصف 17 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے، میکسویل نے 2 اور رچرڈسن نے ایک وکٹ لی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ