الیکشن مہم کے دوران فوج اور عدلیہ پر تنقید کرنے پر پابندی :ضابطہ اخلاق جاری

48

اسلام آباد(آئی این پی)الیکشن کمیشن نے عام انتخابات 2018ء کے سلسلے میں سیاسی جماعتوں، امیدواروں اورپولنگ ایجنٹس کے لیے ضابطہ اخلاق جاری کردیاہے۔سیاسی جماعتیں،امیدوار اور پولنگ ایجنٹس شہریوں کے حقوق کا خیال رکھنے کے پابند ہوں گے،کوئی سیاسی جماعت نظریہ پاکستان،قومی سالمیت کے خلاف خیالات کا اظہار نہیں کر سکتی، امیدواروں کی جانب سے الیکشن کمیشن کو بدنام کرنے پر توہین عدالت کی کارروائی ہوگی،سیاسی جماعتیں، امیدوار اور انتخابی عملہ کسی بھی شہری کو انتخابی عمل سے الگ نہیں رکھیں گے۔تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن نے عام انتخابات 2018ء کے لیے ضابطہ اخلاق جاری کردیاہے۔ضابطہ اخلاق سیاسی جماعتوں،امیدواروں اورپولنگ ایجنٹس کے لیے ہے۔الیکشن کمیشن کے مطابق سیاسی جماعتیں،امیدوار،پولنگ ایجنٹس شہریوں کے حقوق کا خیال رکھنے کے پابند ہوں گے،کوئی سیاسی جماعت نظریہ پاکستان،قومی سا لمیت کے خلاف خیالات کا اظہار نہیں کر سکتی، کوئی سیاسی جماعت یا امیدوار مسلح افواج اور عدلیہ کیخلاف خیالات کا اظہار نہیں کرے گا، سیاسی جماعتیں، امیدوار،پولنگ ایجنٹ الیکشن کمیشن کی ہدایات پرعمل درآمد کے پابند ہوں گے،سیاسی جماعتیں، امیدواروں کی جانب سے الیکشن کمیشن کو بدنام کرنے پر توہین عدالت کی کارروائی ہوگی،سیاسی جماعتیں، امیدوار اور پولنگ ایجنٹس سیکورٹی اہلکاروں سے معاونت کریں گے،سیاسی جماعتیں، امیدوار اور انتخابی عملہ کسی بھی شہری کو انتخابی عمل سے الگ نہیں رکھیں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں