حکومت نے جاتے جاتے سرکاری ملازمین کے زخموں پر نمک چھڑکا

52

فیصل آباد (وقائع نگار خصوصی) ریلوے پریم یونین کے لاہور ڈویژن کے سنیئر نائب صدر خالد محمود چودھری نے کہا ہے کہ تنخواہوں میں مہنگائی کے تناسب سے اضافہ نہ ہونے پر یلوے ملازمین نے بطور احتجاج عید نہیں منائیں گے، اپنی تنخواہوں میں سو فیصد اضافہ کروانے والے ارکان اسمبلی کو غریب ملازمین کی حالت زار پر رحم نہیں آیا، جس کا خمیازہ انہیں آئندہ الیکشن میں بھگتنا پڑے گا، ملک بھر کے مزدور اور سرکاری ملازمین تنخواہوں میں اضافہ نہ کروا سکنے والے ان ارکان اسمبلی کو الیکشن میں ان کی اوقات یاد دلا دیں گے، لیگی حکومت نے جاتے جاتے لاکھوں سرکاری ملازمین کے زخموں پر نمک چھڑکا ہے، انہیں پیپلز پارٹی کے عبرت ناک انجام سے سبق سیکھنا چاہیے تھا۔ انہوں نے کہا کہ غریب سرکاری ملازمین کے چولہے ٹھنڈے پڑرہے ہیں، دن رات اپنے وطن کی خدمت پر مامور ملازمین کی تنخواہوں میں دس فیصد ایڈہاک اضافہ ان کے زخموں پر نمک چھڑکنے کے مترادف ہے۔ پریم یونین عید کے بعد اپنے قائد حافظ سلمان بٹ کی قیادت میں احتجاجی تحریک چلائے گی۔ کراچی سے پشاور تک دما دم مست قلندر ہوگا، کسی کو بھی عوامی سرمائے پر موج مستی نہیں کرنے دیں گے، دس فیصد اضافہ کسی طور پر منظور نہیں، ملازمین کو ان کا حق دلوائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملازمین کو توقع تھی کہ ملازمین کی تنخواہوں میں کم از کم پچاس فیصد اضافہ ہوگا مگر ن لیگ نے بھی جاتے جاتے اپنے سارے وعدے فراموش کردیے ہیں اور ملازمین کی توقعات کو یکدم خاک میں ملا دیا ہے، جس کا خمیازہ اسے آئندہ الیکشن میں بھگتنا پڑے گا۔ ریلوے میں سیاسی بنیادوں پر بھرتی کے بجائے حاضر سروس اور ریٹائرڈ ملازمین کے بچوں کا کوٹہ مقرر کیا جائے۔ گزشتہ کئی برسوں سے ریلوے ملازمین کو ٹی اے اور گریجوٹی کی ادائیگی نہیں کی جارہی ہے جبکہ تعمیراتی فنڈز کے نام پر تنخواہوں سے پانچ فیصد ناجائز کٹوتی کی جارہی ہے کو فوری طور پر ختم کیا جائے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ