گولی چلانے والے سے حفاظت کرنے والی ذات بہت بڑی ہے‘ احسن اقبال 

50
گولی چلانے والے سے حفاظت کرنے والی ذات بہت بڑی ہے‘ احسن اقبال 
گولی چلانے والے سے حفاظت کرنے والی ذات بہت بڑی ہے‘ احسن اقبال 

اسلام آباد (صباح نیوز) وزیر داخلہ چودھری احسن اقبال نے کہا ہے کہ 6 مئی کو ایک بزدل نے میرے اوپر گولی چلائی تھی لیکن گولی چلانے والے سے انسان کی جان کی حفاطت کرنے والی ذات بہت بڑی ہے۔ اللہ تعالیٰ نے مجھے موت کے منہ سے نکالا۔ ہم سب کا فرض ہے کہ ہم پاکستان کے لیے کام کریں، پاکستان کے آئین کے لیے کام کریں اور پاکستان کے عوام کو جوڑنے کے لیے کام کریں ،جو بھی پاکستان کے لوگوں میں نفرت پھیلاتا ہے۔ وہ پاکستان کا دشمن ہے اور جو پاکستان کے لوگوں کو جوڑتا ہے وہ پاکستان کا دوست ہے۔ ان خیالات کا اظہار احسن اقبال نے انسداد دہشت گردی فورس کی پاسنگ آؤٹ پریڈ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ وطن کے لیے موت حاصل کرنا کسی بھی سپاہی یا افسر کے لیے ایک خواب ہوتا ہے۔ وہ خوش قسمت ہوتے ہیں کہ جنہیں اپنے وطن کے دفاع میں شہادت کا مرتبہ نصیب ہو، گولی چلانے والا یہ نہیں جانتا کہ اس قوم کا عزم کتنا مضبوط ہے۔ دہشت گرد کو یہ معلوم نہیں کہ پاکستانی قوم کے بیٹے اور بیٹیاں اس ملک کے چپے، چپے کا دفاع کرنے کے لیے کس قدر پرعزم ہیں اور کس قدر چوکس ہیں۔ مجھے یقین ہے کہ نئے جوانوں کی شمولیت سے اسلام آباد پولیس کی استعداد میں بہترین اضافہ ہو گا۔6مئی کو ایک بزدل نے میرے اوپر گولی چلائی تھی لیکن گولی چلانے والے سے انسان کی جان کی حفاظت کرنے والی ذات بہت بڑی ہے۔ اللہ تعالیٰ نے مجھے موت کے منہ سے نکالا ۔ احسن اقبال کا کہنا تھا کہ میں جوانوں کو یقین دلانا چاہتا ہوں کہ ہم اسلام آباد پولیس کو پاکستان کی بہترین پولیس بنانے کے جس سفر کا آغاز کر چکے ہیں یہ سفر بہت جلد مکمل ہو گا۔ان کا کہنا تھا کہ ہم نے بیرکوں کے منصوبے اور جدید ترین نیشنل پولیس اسپتال کے لیے فنڈز جاری کیے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ