حیدری میں استانی اور طالبہ کو غیرت کے نام پر قتل کیا گیا، پولیس

62

کراچی ( اسٹاف رپورٹر ) غیرت کے نام پر دہرے قتل کا واقعہ ،حیدری میں قتل ہونے والی استانی اور طالبہ کو بھی ان کے اہل خانہ نے غیرت کے نام پر قتل کیا ،پولیس نے قتل میں ملوث 2 ملزمان کو گرفتار کرکے تفتیش کا آغاز کر دیا، تفصیلا ت کے مطابق کراچی میں پھر دو افراد کو غیرت کے نام پر موت کے گھاٹ اتار دیا گیا ۔ اور قتل کو خودکشی کا رنگ دے کرپولیس کو گمراہ کرنے کی کوشش کی گئی ، حیدری کے علاقے کوثر
نیازی کالونی میں استانی اور طالبہ کے قتل میں اہم پیش رفت ہوئی ہے،پولیس کی جانب سے ظاہر کیا گیا قتل کا شبہ درست ثابت ہوا۔ پولیس کے مطابق رابعہ اور نسرین کو غیرت کے نام پر قتل کیا گیا ہے اور اہل خانہ واقعے کو خودکشی کا رنگ دے رہے تھے ،پولیس نے رابعہ کے والدعرب گل اورکزن زاہد کو حراست میں لے لیا، دونوں افراد کو مشکوک بیان کی بنا پر گرفتار کیا گیا تھا۔تفتیشی ذرائع کا کہنا ہے کہ نسرین نے 1سال قبل رابعہ کا رشتہ بھائی کیلیے مانگا تھا جس پر قبیلہ مختلف ہونے کی وجہ سے رابعہ کے اہل خانہ نے رشتے سے انکارکر دیا تھا ،لیکن اس کے باوجود رابعہ اور نسرین رابطے میں رہتی تھیں،اس بات پراہل خانہ کو اعتراض تھا،قتل سے 5روز پہلے رابعہ کی منگنی کردی گئی تھی جس سے وہ ناخوش تھے ۔تفتیشی ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ قتل سے پہلے رابعہ کے اہل خانہ نے نسرین کو بہانے سے گھر بلوایا تھا جبکہ ملزمان نے دونوں خواتین کوقتل کرنے کے بعدپستول نسرین کے الٹے ہاتھ میں رکھاجبکہ مقتولہ نسرین کام کیلیے سیدھا ہاتھ استعمال کرتی تھی، جائے وقوع سے ملنے والے 2 میگزین سے بھی تفتیش میں مدد ملی ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ