دی بیلٹ اینڈ روڈ منصوبہ عالمی قوانین کے تحت جاری رکھیں گے ،چین

102

بیجنگ(اے پی پی)چین نے کہا ہے کہ وہ’’ دی بیلٹ اینڈ روڈ‘‘ منصوبے کے لیے عالمی قوانین کی مکمل پاسداری کرتے ہوئے منصوبے پر کام کے لیے کوئی خفیہ معاہدے یا بیک روم ڈیلز نہیں کی جائیں گی۔چین کی قومی عوامی کانگریس کی 13ویں قومی کمیٹی کے پہلے سالانہ اجلاس کے بعد چین
کے وزیر خارجہ وانگ ای نے جمعرات کو پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ منصوبے پر چین کا دوسرے ممالک سے تعاون دھوپ کی طرح واضح اور شفاف ہے، اس میں مختلف اطراف نے برابری کی سطح پر حصہ لیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال مئی میں 140 سے زیادہ ممالک کے نمائندوں نے دی بیلٹ اینڈ روڈ کے حوالے سے عالمی تعاون کی کانفرنس میں شرکت کی جس سے عالمی برادری کی جانب سے اس انیشیٹو پر اعتماد اور حمایت کا اظہار کیا گیاہے،اس وقت تک80سے زیادہ ممالک اور عالمی تنظیموں نے چین کے ساتھ اس ضمن میں تعاون کے سمجھوتوں پر دستخط کیے ہیں اور تعاون کے کافی منصوبے جاری ہیں۔وانگ ای نے کہا کہ دی بیلٹ اینڈ روڈ کی تعمیر بین الاقوامی ضوابط اور منڈی کے اصول کے مطابق جاری رہے گی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ