پاکستانی زراعت میں نوجوان قیادت کے لیے امریکی ورکشاپ کا انعقاد

78
پاکستانی زراعت میں نوجوان قیادت کے لیے امریکی ورکشاپ کے موقع پر شرکاء کا گروپ فوٹو
پاکستانی زراعت میں نوجوان قیادت کے لیے امریکی ورکشاپ کے موقع پر شرکاء کا گروپ فوٹو

اسلا م آباد (کامرس ڈیسک) زراعت کے شعبے میں نوجوانوں کی شمولیت کو فروغ دینے کے موضوع پر امریکا کی مالی ا عانت سے ورکشاپ کا آج اسلام آ باد میں آغاز ہوا۔ امریکا کے محکمہ زراعت(یو ایس ڈی اے) کے تین سہولت کاراس ہفتے منعقدہ تین روزہ ورکشاپ کے دوران پاکستان میں پانی مذاکرات اور زمین کی صحت اورزرخیزی کے منصوبوں کے لیے تعاون فراہم کر رہے ہیں۔ اس ورکشاپ میں یو ایس ڈی اے کے “فور ایچ” پروگرام سے ماخوذ شدہ نوجوانوں کی مثبت مشغولیت کا ماڈل استعمال کیا جا رہا ہے جو کہ امریکا میں انیسویں صدی کی اواخرسے مر وج ہے۔ اس ورکشاپ میں پنجاب، سندھ، کے پی کے اور بلوچستان سے تعلق رکھنے والے شرکاء کے ساتھ مل کر پاکستان میں زرعی شعبے میں ابھرتی ہوئی نوجوان قیادت کی شمولیت بڑھانے کے لیے سفارشات اور آئندہ کے لا ئحہ عمل پر بات چیت کی جا رہی ہے۔ ورکشاپ کا مقصد یو ایس ڈی اے کی سات سالہ مشغولیت کا منصوبہ تیار کرنا ہے، جس میں نہروں کے پشتوں کی بحالی، آبپاشی اور مٹی کی صحت کے لیے بہترین انتظامات اور ٹیکنالوجی کے مظاہرے، پھلاؤ اور عمل کو فروغ دینے کے معاملات شامل ہیں۔ یو ایس ایڈ، یو ایس ڈی اے، ورلڈ لرننگ اور انٹرنیشنل سینٹر فار ایگریکلچرل ریسرچ ان ڈرائی ایریاز (آئی سی اے آرڈی اے)کے توسط سے منعقدہ اس تربیتی نشست میں وفاقی اور صوبائی وزارتوں، جامعات اور غیر سرکاری تنظیموں کے 57 عہدیدار اور ماہرین شرکت کر رہے ہیں۔ یو ایس ڈی اے کے ماہرین میں امریکی محکمہ زراعت کے قومی ادارہ برائے خوراک و زراعت میں نوجوانوں کے امور اور فور ایچ کے شعبے کے ڈائریکٹرڈاکٹر لیزا لکشمن، یوایس ڈی اے کے خارجہ زرعی امور کے پروگرام منیجر ہلرای لینڈفرائیڈ اور پروگرام ڈائریکٹر بینجمن اوگسٹ شامل ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ