دبئی میں پاکستانی مصنوعات کی سنگل کنٹری نمائش ستمبر میں منعقد ہوگی

135
نائب صدرFPCCI وحید احمد کی پاکستانی سفیر معظم احمد کے ساتھ ابوظہبی میں ملاقات کے موقع پر لیا گیا فوٹو
نائب صدرFPCCI وحید احمد کی پاکستانی سفیر معظم احمد کے ساتھ ابوظہبی میں ملاقات کے موقع پر لیا گیا فوٹو

کراچی(اسٹاف رپورٹر) وفاق ایوان ہائے صنعت و تجارت ایف پی سی سی آئی کے تحت رواں سال ستمبر میں پاکستانی مصنوعات کی سنگل کنٹری نمائش متحدہ عرب امارات میں منعقد کی جائے گی جبکہ اوورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن کے تحت متحدہ عرب امارات میں مقیم پاکستانی اور یو اے ای کے سرمایہ کاروں کا وفد بھی پاکستان کا دورہ کرے گا تاکہ دونوں ملکوں کے مابین تجارت اور سرمایہ کاری کوفروغ دیا جاسکے۔ اس بات کا فیصلہ ایف پی سی سی آئی کے نائب صدر اور پی ایف وی اے کے سرپرست اعلیٰ وحید احمد کی پاکستانی سفیر معظم احمد کے ساتھ ابوظہبی میں ملاقات میں کیا گیا۔ اس موقع پر اوورسیزپاکستانی فاؤنڈیشن کے ایگزیکٹو کونسل ممبر ڈاکٹر فرحان بھی موجود تھے۔ پاکستانی سفیر نے بتایا کہ متحدہ عرب امارات میں سنگل کنٹری نمائش کی تجویز حکومت پاکستان کے زیر غور ہے۔ انہوں نے بتایا کہ متحدہ عرب امارات پاکستانی پھل سبزیوں، گوشت اور پولٹری مصنوعات سمیت دیگر غذائی اشیاء کی بڑی مارکیٹ ہے اور دبئی کے راستے خلیجی ریاستوں تک پاکستانی مصنوعات پہنچائی جاسکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ متحدہ عرب امارات نے پاکستان سے پولٹری مصنوعات پر عائد پابندی ختم کردی ہے جس سے پاکستان کے لیے برآمدات میں اضافہ کے مواقع بڑھ گئے ہیں۔اس موقع پرپاکستانی پھلوں اور سبزیوں کی بر�آمدات بھی زیر غورلائی گئیں۔ وحید احمد نے کہا کہ متحدہ عرب امارات پاکستانی آم اور کینو کی بڑی مارکیٹ ہے۔ پاکستانی سفارتخانہ کے تعاون سے آم کے سیزن میں بھرپور مہم چلائی جائے گی۔ وحید احمد نے کہا کہ ایف پی سی سی آئی بھی متحدہ عرب امارات میں پاکستانی مصنوعات کی سنگل کنٹری نمائش کی منصوبہ بندی کررہی ہے جو ستمبر میں دبئی میں منعقد کی جائے گی۔
اس نمائش کے ذریعے نہ صرف متحدہ عرب امارات بلکہ خلیجی ریاستوں تک پاکستانی مصنوعات کی رسائی بڑھائی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ رواں سیزن پی ایف وی اے دبئی کی ہائپر مارکیٹس میں پاکستانی آم کی پروموشن منعقد کرے گی۔ پاکستانی سنگل کنٹری نمائش کے ساتھ سرمایہ کاری کانفرنس بھی منعقد کی جائے گی تاکہ پاکستان میں متحدہ عرب امارات کی سرمایہ کاری میں اضافہ کیا جاسکے۔ اس موقع پر اوورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن کے ڈاکٹر فرحان نے بتایا کہ پاکستانی اور متحدہ عرب امارات کے سرمایہ کاروں کا وفد پاکستان کا دورہ کرے گا تاکہ تجارت اور سرمایہ کاری کے امکانات سے فائدہ اٹھایا جاسکے سرمایہ کاروں کا وفد سی پیک منصوبوں سے پیدا ہونے والے امکانات کا بھی جائزہ لے گا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ