امریکا افغان سرحد پر باڑ لگانے کا خرچ اداکرے ،وزیرخارجہ

58

اسلام آباد (آن لائن) وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کہا ہے کہ دہشت گردی کم کرنے کے لیے پاک افغان سرحد پر باڑ لگانے کا خرچ امریکا کو ادا کرنا چاہیے پچھلے سال واپس گئے تقریباً 6 لاکھ مہاجرین میں سے زیادہ تر واپس آگئے۔ غیر ملکی خبر ایجنسی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ پاک افغان سرحد پر باڑ لگانے کا کام 2019 ء تک مکمل ہوجائے گا۔ انہوں نے کہا کہ امریکا کے لیے پاک افغان سرحد پر باڑ پر لگانے کا خرچ زیادہ نہیں۔ اس لیے ان کو دہشت گردی میں کمی لانے کی خاطر خرچ برداشت کرنا چاہیے۔ خواجہ آصف نے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ امریکا کو دہشت گردی کے خلاف جنگ بہت مہنگی پڑ رہی ہے تاہم پچھلے سال افغانستان واپس جانے والے تقریباً 6 لاکھ مہاجرین میں سے زیادہ تر واپس پاکستان آگئے ہیں۔ جن کی وجہ سے مہاجرین کے بھیس میں دہشت گردوں کو چھپنے کی جگہ مل جاتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اور امریکاکشیدگی کو کم کرنے کے لیے کوشش کررہے ہیں۔ امید ہے حالات معمول پر آجائیں گے۔ جس کے بعد ہم آہنگی سے کام کرنے کے بہتر نتائج سامنے آئیں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ